The news is by your side.

Advertisement

النصرۃ فرنٹ کی مدد روکے بغیر شام میں امن ممکن نہیں، روس

جنیوا : اقوام متحدہ میں روس کے خصوصی مندوب نے کہا ہے کہ شام میں النصرۃ فرنٹ کو ہتھیاروں کی فراہمی روکے بغیرامن کا قیام ممکن نہیں۔

تفصیلات کے مطابق اقوام متحدہ میں روس کے خصوصی مندوب نے سلامتی کونسل میں گفتگو کرتے ہوئے مغرب پرالنصرہ فرنٹ کی مسلسل مدد کا الزام لگاتے ہوئے متنبہ کیا ہے کہ اگر النصرہ فرنٹ کو جنگی ہتھیاروں کی فراہمی نہ روکہ گئی تو یہ جنگ یوں ہی جاری رہے گی۔

روسی مندوب کا کہنا تھا کہ مغرب نے النصرہ فرنٹ کو ٹینکس اوربھاری ہتھیاروں کی فراہمی جاری رکھی ہوئی ہے جس کی وجہ سے شام میں دہشت گردی کی کارروائی میں اضافہ ہوجاتا ہے اور امن مزاکرات ناکامی کا شکار ہوجاتے ہیں۔

دوسری جانب امریکا کی جانب سے حلب میں محصور شہریوں کو انسانی امداد کی عدم فراہمی کا الزام ماسکو اوردمشق پر لگایا ہے جس کا جواب دیتے ہوئے روسی مندوب کا کہنا تھا کہ انسانی امداد کی عدم فراہمی کی وجہ دہشت گردی ہے۔

روسی مندوب نے مطالبہ کیا کہ امریکا حزب اختلاف کے گروہوں اوردہشت گردوں میں فرق واضح کرے اوران کی گراؤنڈ پوزیشنزسے آگاہ کرے تا کہ خطے میں دیرپا امن کے لیے راست اقدام اُٹھائی جا سکیں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں