The news is by your side.

Advertisement

پرنس ہیری کی زندگی پر شریک حیات نے کیا اثرات مرتب کیے؟

لندن: ملکہ الزیبتھ کے پوتے شہزادہ ہیری کی زندگی پر میگھن مرکل نے گہرے اثرات مرتب کیے ہیں، اس حوالے سے ہر سطح پر گفتگو بھی ہوتی رہتی ہے، تاہم اب ایک شاہی تبصرہ نگار نے اس حوالے سے نئے پہلو کی طرف اشارہ کر دیا ہے۔

معروف شاہی تبصرہ نگار رابرٹ لیسی نے دعویٰ کیا ہے کہ پرنس ہیری کی زندگی پر میگھن نے بہت زیادہ اثرات مرتب کیے ہیں۔ اس سلسلے میں انھوں نے جس طرح پرنس ہیری کی زندگی کے مختلف پہلوؤں کا تجزیہ کیا ہے، اس سے ان اثرات کی شدت کو سمجھا جا سکتا ہے جو ڈچز آف سسیکس نے ان کی زندگی پر مرتب کیے۔

برطانوی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے رابرٹ لیسی نے کہا کہ میگھن مرکل سے شادی کے بعد پرنس ہیری اپنے اندر بہت ساری تبدیلیاں لائے، ان کے ارد گرد کی چیزیں بدل گئیں۔

ملکہ برطانیہ نے شہزادہ ہیری اور میگھن کی تصاویر ہٹوادیں

تبصرہ نگار کے مطابق اس کی سب سے بڑی مثال فوج کے حوالے سے ہے، جہاں پرنس ہیری کو بڑے احترام کی نگاہ سے دیکھا جاتا ہے، انھوں نے سابق فوجیوں کے لیے کام کر کے پذیرائی حاصل کی، ان کی اچھی ساکھ بنی۔

ریزرو فوجی کے طور پر شہزادہ ہیری نے افغان جنگ میں بھی شرکت کی تھی، چناں چہ میگھن سے شادی کے بعد ان سے واقعی یہ امید کی جا رہی تھی کہ یہ نیا جوڑا بادشاہت کا نیا مستقبل ثابت ہوگا، یہ جوڑا بادشاہت کو جدت دینے کے سلسلے میں بھی معاون ہوگا، لیکن یہ اندازے دھرے کے دھرے رہ گئے، لوگوں کو جس کی توقع نہیں تھی وہ تبدیلی آئی اور اس جوڑے نے شاہی خاندان ہی سے علیحدگی اختیار کر لی۔

لیسی اس تجزیے سے یہ اشارہ دینا چاہ رہے تھے کہ ہیری کی زندگی پر یہ میگھن کے اثرات تھے کہ انھوں نے شاہی خاندان بھی چھوڑنے کا مشکل ترین فیصلہ کر لیا۔ لیسی نے کہا کہ میگھن مرکل پرنس ہیری کی ماضی کی افسردگی کے لیے روشنی کا مینارہ بنی ہیں، اور وہ ہر قدم پر انھیں بہتری کی امید دلاتی رہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں