The news is by your side.

زمین کے پڑوسی سیارے پر ‘سورج گرہن’ کا نظارہ کیسا ہوتا ہے؟

زمین پر سورج گرہن کو تو آپ نے کئی بار دیکھا ہوگا یا کم از کم تصاویر تو دیکھی ہوں گی،مگر مریخ پر سورج گرہن کا نظارہ کیسا ہوتا ہے؟ اس کا جواب آپ کو حیران کردے گا۔

امریکی خلائی ادارے ناسا کے مریخ پر موجود روور پرسیورینس نے زمین کے پڑوسی سیارے میں سورج گرہن کا منظر کیمرے کی آنکھ میں محفوظ کرلیا ہے۔

امریکی خلائی ادارے ناسا کے مریخ پر موجود روور پرسیورینس نے زمین کے پڑوسی سیارے میں سورج گرہن کا منظر کیمرے کی آنکھ میں محفوظ کیا۔

مریخ کے آلو کی ساخت کے چاند فوبوس سورج کے سامنے سے گزرا تو جزوی گرہن دیکھنے میں آیا، ایک سائنسدان پال بائرن نے یہ تصویر ٹوئٹر پر شیئر کی۔

یہ بھی پڑھیں:  انسان کب تک چاند پر رہائش اختیار کرلے گا؟ ناسا کا دعویٰ

انہوں نے اپنے ٹوئٹ میں بتایا کہ مریخ پر جزوی سورج گرہن 18 نومبر کو ہوا تھا۔

بعد ازاں ایک ٹوئٹر صارف نے ان تصاویر کو اکٹھا کرکے ایک مختصر ویڈیو تیار کی جس میں مریخ کے چاند کو سورج کے سامنے سے گزرتے ہوئے دکھایا گیا ہے۔

خیال رہے کہ مریخ کے دو چاند ہیں جن میں سے ایک فوبوس ہے جو سیارے کے کافی قریب گردش کرتا ہے۔

قابل ذکر بات یہ ہے کہ امریکی خلائی ایجنسی کا پرسیورینس روور مریخ کی چٹان کا پہلا نمونہ لینے کے لیے مریخ پر موجود ہے۔

پرسیورینس فروری دو ہزار اکیس میں سیارے کے جیزیرو نامی 45 کلومیٹر چوڑے (30 میل) گڑھے میں اترا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں