The news is by your side.

Advertisement

ایم کیو ایم اور پی پی کی ملاقات کس نے کروائی؟ ضامن کون؟

حکومت کی اتحادی ایم کیو ایم پاکستان کا پیپلزپارٹی سے رابطہ ق لیگ کے کہنے پر ہوا تھا۔

نمائندہ اے آر وائی نیوز نے اپنے ذرائع کے حوالے سے بتایا ہے کہ ایم کیو ایم نے چوہدری برادران سے ملاقات میں پی پی پر تحفظات کا اظہار کیا تھا جس کے بعد چوہدری برادران نے آصف زرداری سے بات کر کے ملاقات طےکرائی۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ پی پی اور ایم کیوایم میں معاملات طے ہوئے تو ق لیگ ضامن ہوگی اس حوالے سے آصف زرداری نے ق لیگ کو ن لیگ کی گارنٹی کی آفر دی تھی۔

گزشتہ روز ایم کیوایم اور پیپلزپارٹی نے وسیع تر مفاد میں مل کر کام کرنے پر اتفاق کیا تھا۔

ایم کیو ایم اور پی پی کا ساتھ چلنے پر اتفاق

ملاقات میں پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹرین کے صدر آصف علی زرداری، پی پی پی چیئرمین بلاول بھٹو زرداری، یوسف گیلانی، مرادعلی شاہ، ناصرحسین شاہ، سعیدغنی، شرجیل میمن، رخسانہ بنگش ودیگر موجود تھت جب کہ ایم کیو ایم کے وفد میں عامرخان، خالدمقبول صدیقی، امین الحق، وسیم اختر،خواجہ اظہاراور جاویدحنیف شریک ہوئے۔

ذرائع نے بتایا کہ آصف زرداری نےایم کیوایم مطالبات کوتسلیم کرتے ہوئے کہا کہ ایم کیو ایم کے مینڈیٹ کو تسلیم کرتے ہیں، شہری سندھ کیلئےسندھ حکومت تعاون کرےگی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں