The news is by your side.

Advertisement

رویندر جڈیجہ اولین ڈبل سنچری کیوں نہ بناسکے؟

بھارت کے تجربہ کار آل راؤنڈر سری لنکا کیخلاف موہالی ٹیسٹ میں دوسرے روز175 رنز پر کھیل رہے تھے کہ اچانک  کپتان  روہت شرما نے اننگ ڈیکلیئر کردی۔

ہندوستان نے سری لنکا کیخلاف موہالی ٹیسٹ کے دوسرے روز اپنی پہلی اننگ 8 وکٹ پر 574 رنز بناکر اننگ اس وقت ڈیکلیئر کردی جب تجربہ کار آل راؤنڈر رویندر جڈیجہ نے اپنے کیریئر کی بہترین اننگ کھیلتے ہوئے 175 رنز بناکر کریز پر موجود تھے۔

بائیں ہاتھ کے بلے باز جڈیجہ نے اننگ کے دوران 17 چوکے اور 3 چھکے لگائے۔

میچ میں جڈیجہ جس طرح بلے بازی کررہے تھے اس کو دیکھ کر لگ رہا تھا کہ وہ اپنے کیریئر کی پہلی ڈبل سنچری باآسانی بنالیں گے کہ اچانک کپتان روہت شرما نے اننگ ڈیکلیئر کرنے کا اعلان کردیا۔

بھارتیوں نے کپتان روہت شرما کے اس مرحلے میں پر اننگ ڈیکلیئر کرنے پر سوالات اٹھادیے ہیں، سوشل میڈیا پر شائقین ٹیم انڈیا کے ہیڈ کوچ راہول ڈریوڈ اور کپتان روہت شرما پر شدید تنقید کررہے ہیں شائقین کا کہنا ہے کہ جڈیجہ کے پاس ڈبل سنچری بنانے کا سنہرا موقع تھا لیکن کوچ اور کپتان نے اس کو پورا نہیں ہونے دیا۔

اس موقع پر بعض صارفین نے 2004 کے بھارت کے دورہ پاکستان کو بھی یاد کیا اس وقت سچن ٹنڈولکر ملتان ٹیسٹ میں 194 رنز پر بیٹنگ کررہے تھے کہ جب راہول ڈریوڈ اننگ ڈیکلیئر کرکے سب کو حیران کردیا تھا، ڈریوڈ اس وقت کپتان اور اب کوچ کی صورت میں بھارتی ٹیم کے ساتھ ہیں۔

ایک صارف نے لکھا کہ اگر رویندر جڈیجہ کی جگہ روہت شرما یا ویرات کوہلی ہوتے تو کیا وہ اننگ ڈیکلیئر کرنے کا اعلان کرتے، ایک اور صارف نے لکھا کہ آج سے میں راہول ڈریوڈ کا مکمل بائیکاٹ کرتا ہوں یہ ناانصافی ہے، جڈیجہ ڈبل سنچری کے حقدار تھے۔

واضح رہے کہ رویندر جڈیجہ دوسرے بھارتی کرکٹر ہیں جنہوں نے بین الاقوامی کرکٹ میں 5 ہزار رنز بنانے کے ساتھ 400 وکٹیں بھی حاصل کر رکھی ہیں۔ سابق کپتان کپیل دیو نے ہندوستان کیلیے 356 بین الاقوامی میچز کھیلتے ہوئے 9031 رنز بنائے اور 687 وکٹیں حاصل کی تھیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں