نوازشریف کا دورہِ سعودی عرب ناکام ہوگیا، خورشید شاہ کا دعویٰ Saudia Visit
The news is by your side.

Advertisement

راحیل شریف کو اسلامی اتحاد کا سربراہ کیوں بنایا؟ وزیر اعظم جواب دیں، خورشید شاہ

اسلام آباد: اپوزیشن لیڈر خورشید شاہ نے کہا ہے کہ وزیراعظم اسمبلی آکر بتائیں کہ راحیل شریف کو اسلامی اتحاد کا سربراہ کس بنیاد پر بنایا گیا؟، وزیراعظم کا دورہ سعودی عرب ناکام ہوگیا، نواز شریف کو سعودی قیادت نے مثبت جواب نہیں دیا اس لیے اس دورے کا اعلامیہ بھی جاری نہیں کیا گیا۔

قومی اسمبلی کے اجلاس میں اظہار خیال کرتے ہوئے قائد حزب اختلاف نے کہا کہ وزیراعظم قوم کو بتائیں کہ کس بنیاد پر راحیل شریف اسلامی اتحاد کے سربراہ بنے اور اُن کی سعودی عرب جانے کے پیچھے کیا وجوہات پوشیدہ تھیں، خورشید شاہ نے اسپیکر قومی اسمبلی سےدرخواست کی کہ وہ وزیر اعظم کو ایوان میں بلائیں تاکہ نوازشریف اسلامی اتحاد اور سعودی عرب قطر تنازع پر بھی ایوان کو بریفنگ دیں۔

خورشید شاہ نے کہا کہ حکومت میں قطر کے بارے میں قرارداد پیش کرنےکی جرات نہیں کیونکہ قطری نے تو ان کو جھوٹا سچا خط بھی دیا تھا، اب حکمران اتنے خوفزدہ ہیں کہ قرار داد بھی نہیں پڑھتے اور اسے منظور بھی نہیں کرتے۔

قائد حزب اختلاف نے اسپیکر کو یقین دلایا کہ وزیر اعظم کو جس روز ایوان میں بلایا جائے گا اپوزیشن کی جانب سے کوئی نعرے نہیں لگائے گا تاہم اگر ایسا ہوا تو میں خود استعفیٰ دے دوں گا۔ اُن کا مزید کہنا تھا کہ لیگی وزرا جے آئی ٹی کی آڑ میں سپریم کورٹ کو دھمکیاں دے رہے ہیں، ن لیگ کے دماغ میں 90 کی ہوا بھری ہوئی ہے کوئی خوش فہمی میں نہ رہے یہ وہ دور نہیں اگر کوئی حرکت کرنے کی کوشش کی گئی تو عوام گھروں پر بھی نہیں جانے دیں گے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں