The news is by your side.

Advertisement

کیا آئی جی سندھ کلیم امام کو عہدے سے ہٹا دیا جائے گا؟

کراچی: آئی جی سندھ کلیم امام کو ہٹایا جائے یا نہیں، اس سلسلے میں آج سندھ کابینہ کا ہنگامی اجلاس طلب کر لیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق ذرایع کا کہنا ہے کہ آئی جی سندھ کلیم امام کو عہدے سے ہٹانے کے معاملے پر سندھ کابینہ کا اجلاس آج سہ پہر 3 بجے سی ایم ہاؤس میں طلب کیا گیا ہے۔

ذرایع کے مطابق اجلاس میں آئی جی سندھ کے مستقبل کے حوالے سے فیصلہ کیا جائے گا، سندھ حکومت کا مؤقف ہے کہ آئی جی سندھ کلیم امام حکومت اور پولیس افسران میں غلط فہمیاں پیدا کر رہے ہیں۔ ہنگامی اجلاس میں وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ آئی جی پولیس کے حوالے سے کابینہ کو اعتماد میں لیں گے۔

سندھ پولیس اور صوبائی حکومت کے درمیان اختیارات کا تنازع

یاد رہے کہ چند پولیس افسران کے تبادلوں کے معاملے پر سندھ حکومت اور آئی جی سندھ کئی بار آمنے سامنے آئے، دسمبر میں آئی جی سندھ کلیم امام نے چند افسران کو صوبہ بدر کرنے پر سخت رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا تھا کہ ان فیصلوں نے پولیس کے مورال اور آئی جی کی کمانڈ کو کم زور کیا ہے۔

آئی جی کلیم امام سندھ حکومت کے احکامات کے آگے ڈٹ کر کھڑے ہوئے اور افسران کے تبادلے کے احکامات کو مسترد کرتے ہوئے افسران کو عہدہ چھوڑنے سے روک دیا تھا۔

24 دسمبر کو سندھ کابینہ کے اجلاس میں وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے ایڈیشنل انسپکٹر جنرل (اے آئی جی) کو سختی سے کہا کہ میں کچھ نہیں جانتا، کچھ بھی کریں مگر کراچی کو اسٹریٹ کرائم سے پاک کریں۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں