ناکارہ اسکیٹ بورڈز خوبصورت اشیا میں تبدیل -
The news is by your side.

Advertisement

ناکارہ اسکیٹ بورڈز خوبصورت اشیا میں تبدیل

ہماری روزمرہ زندگی میں استعمال ہونے والی کوئی بھی چیز بے کار نہیں ہوتی۔ استعمال کے بعد ہمیں یوں لگتا ہے کہ وہ اب ہمارے کام کی نہیں رہیں، لیکن بعض لوگوں کے لیے یہیں سے کام شروع ہوتا ہے۔

پرانی، ٹوٹی پھوٹی اور بے کار اشیا کو خوبصورت بنا کر پھر سے قابل استعمال لانے کا خیال نیا نہیں ہے۔

ہر گزرتے دن کے ساتھ اس میں جدت آتی جارہی ہے جبکہ جدید ٹیکنالوجی نے اس کام میں بھی مزید دلکشی پیدا کردی ہے۔

ایسا ہی فن 2 فنکار بھائیوں کے پاس بھی ہے جو پرانے اسکیٹ بورڈز سے خوبصورت اشیا بناتے ہیں۔

Our newest batch of skateboard bowls is now available on our Etsy page.

A post shared by Martinus & Adrian Pool (@adrianmartinus) on

ایڈریان اور مارٹن کینیڈا سے تعلق رکھنے والے دو بھائی ہیں۔ یہ لکڑیوں سے مختلف اشیا بنانے کا کام کرتے تھے تاہم کچھ عرصہ قبل انہوں نے اسکیٹ بورڈ سے کچھ اشیا بنائیں۔

وہ اشیا اتنی خوبصورت اور دیدہ زیب تھیں کہ اس کے بعد انہوں نے اسکیٹ بورڈز کو ہی اپنا مستقل مٹیریل چن لیا۔ اب وہ تمام اشیا اسکیٹ بورڈز سے بناتے ہیں۔

ان دونوں بھائیوں نے ابتدا میں اپنے اسکیٹ بورڈز استعمال کیے، لیکن جب ان کی بنائی ہوئی اشیا پسند کی جانے لگیں اور انہیں آرڈرز ملنا شروع ہوئے تو انہوں نے اسکیٹ بورڈز جمع کرنے شروع کردیے۔

انہوں نے اپنے دوستوں کے اور علاقے میں موجود اسکیٹ بورڈز کی دکانوں سے ٹوٹ جانے والے اور ناکارہ اسکیٹ بورڈز لے کر استعمال میں لانے شروع کردیے۔

ان کی بنائی گئی ان اشیا میں معمولی سجاوٹ کی اشیا سے لے کر فرنیچر تک شامل ہے۔

Mixed recycled wood bowl on our Stackton credenza in sapele

A post shared by Martinus & Adrian Pool (@adrianmartinus) on

More snow for calgary tomorrow, might as well just stay in and play crib.

A post shared by Martinus & Adrian Pool (@adrianmartinus) on

New planters by @annetranholm now available on our website.

A post shared by Martinus & Adrian Pool (@adrianmartinus) on

اسکیٹ بورڈز سے بنائی جانے والی یہ اشیا نہایت رنگین اور خوبصورت ہیں جنہیں بہت پسند کیا جاتا ہے۔

Shaping the outside of a recycled skateboard bowl.

A post shared by Martinus & Adrian Pool (@adrianmartinus) on

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں