The news is by your side.

Advertisement

صحت کا عالمی دن : ذیابطیس کو شکست دینی ہے

کراچی: آج پاکستان سمیت دنیا بھر میں صحت کا عالمی دن ” ورلڈ ہیلتھ ڈے “ بھرپور طریقے سے منایا جارہا ہے۔

اس سال ڈبلیو ایچ او نے اس دن کے لئے’’ذیابطیس کو شکست‘‘ کے موضوع کا انتخاب کیا ہے اور اس کے لئے سلوگن ’’طاقت ور رہ کرذیابطیس کا تدارک ‘‘ تک تجویز کیا ہے۔

ذیابطیس کو خاموش قاتل بھی کہا جاتا ہے اور پاکستان سمیت دنیا بھر میں ہرسال ہزاروں افراد اس بیماری کے سبب موت کا شکار بن جاتے ہیں۔


خراٹے لینے کی عادت ذیابطیس کا خطرہ بڑھادیتی ہے


اس دن کے منانے کا مقصد دنیا بھر کے لوگوں کو صحت کی اہمیت سے آگاہ کرنا ہے اس سلسلے میں ملک بھر میں وزارت صحت، محکمہ صحت، پاکستان میڈیکل ایسوی ایشن، دیگر طبی تنظیموں اور این جی اوز کے زیر اہتمام خصوصی واکس، سیمینارز، کانفرنسز اور دیگر تقریبات کا اہتمام کیا جارہا ہے۔

سیمینارز اور کانفرنسز میں محفوظ خوراک اور صحت مند زندگی گزارنے کی سنہری اصولوں بارے آگاہی دی جائے گی اور ماہرین اپنے مقالے پیش کریں گے مقررین صحت کے حوالے سے درپیش خطرات اور دیگر متعلقہ امور پر تفصیل سے روشنی ڈالیں گے۔


دہی کا روزانہ استعمال ذیابطیس ٹائپ ٹو کے خطرہ کو کم کر دیتا ہے


دنیا بھر میں صحت کا عالمی دن سب سے پہلے 1950ءمیں منایا گیا، 1948ء میں عالمی ادارہ صحت کے ذیلی ادارے ڈبلیو ایچ او ہیلتھ اسمبلی نے ہر سال 7اپریل کو صحت کا عالمی دن منانے کی منظوری دی جس کے بعد دنیا بھر میں 7اپریل کو ” ورلڈ ہیلتھ ڈے “ منایا جاتا ہے۔

واضح رہے کہ ہر سال پاکستان میں ہزاروں بچے پینے کا صاف پانی میسر نا ہونے اور غذائی قلت کے سبب موت کے منہ میں چلے جاتے ہیں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں