اسلام کے 1400 سال کی تاریخ میں پہلی بار خاتون نے پورا قرآن ہاتھ کی کڑھائی سے تیار کرلیا -
The news is by your side.

Advertisement

اسلام کے 1400 سال کی تاریخ میں پہلی بار خاتون نے پورا قرآن ہاتھ کی کڑھائی سے تیار کرلیا

کراچی : قرآن پاک کی محبت میں سرشار پاکستانی خاتون نے پورا قرآن ہاتھ کی کڑھائی سے تیار کرلیا۔

کراچی کے علاقے کورنگی سے تعلق رکھنے والی ایک پشتون خاتون زمرد خان ہاتھ سے کڑھائی کرکے قرآن پاک کا نسخہ تیار کرلیا ، زمرد نے اپنی زندگی قرآن کو پورا کرنے کے لئے وقف کردی، اس کامیابی سے پشتون خاتون اسلام اور مقدس کتاب کے لئے اپنی محبت ظاہر کرنا چاہتی ہے۔

اسلام کے 1400 سال کی تاریخ میں پہلی بار ایسا ہوا ہے کہ کسی خاتون نے قرآن کریم کو ہاتھ کی کڑھائی کے زریعے تیار کیا ہو۔

قرآن پاک کو سوتی کے کپڑے پر تیار کیا گیا ہے جب کہ ہر ورق کو ہرے اور سنہرے دھاگوں کی کڑھائی سے دیدہ زیب بنایا گیا ہے۔

زمرد خان نے قرآن پاک کا حسین نسخہ سات سال چھ ماہ میں مکمل کیا، نایاب نسخے کا وزن 63 کلو گرام ہے اور قرآن کے تمام سیپاروں اور اوراق کو علیحدہ علیحدہ تیار کیا گیا ہے۔

اس کے علاوہ زمرد خان نے قرآن مجید کا مستند اردو ترجمہ بھی تیار کیا ہے۔

زمرد خاتون نے قرآن پاک کے اس نسخے کی تیاری پر اللہ کا شکر ادا کرتے ہوئے کہا کہ جب سات سال قبل میں نے یہ نیک کام کرنے کی ٹھانی تو پھر وقت گزرنے کا احساس ہی نہیں ہوا۔

زمرد کی جانب سے نایاب قرآن کریم کی تیاری پر ان کے اہل خانہ اور اہل محلہ بھی خوش ہیں، ان کی والدہ کا کہنا ہے کہ زمرد کی محنت اور اللہ تعالیٰ سےمحبت قابل فخر ہے۔

یاد رہے اس سے قبل  آذربائیجانی نژاد مصورہ نے ریشم کے شفاف اوراق پرسونے اورچاندی سے قرآن شریف تحریر کیا تھا، انھوں نے اس کی تیاری میں 50 میٹر شفاف کالا ریشم اور 1500 ملی لیٹر سنہری اور چاندی کی سیاہی استعمال کی۔


اگرآپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اوراگرآپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پرشیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں