The news is by your side.

Advertisement

کرونا وائرس کے خلاف بل گیٹس کی کاوشوں کے عالمی سطح پر چرچے

لندن: مائیکروسافٹ کے بانی اور دنیا کے دوسرے امیر ترین شخص بل گیٹس کی کرونا وائرس کے خلاف کاوشوں کو عالمی سطح پر سراہا جارہا ہے، برطانوی جریدے نے بھی تعریف کی۔

برطانوی جریدے ’فائی نینشل ٹائمز‘ کا کہنا ہے کہ بل گیٹس اور ان کی فاؤنڈیشن وبائی مرض کے خلاف جنگ میں اپنے تمام تر وسائل استعمال کررہے ہیں، ان کی پوری توجہ کوویڈ 19 پر مرکوز ہے۔

فاؤنڈیشن وبائی مرض کے علاج کی مدد میں اب تک مرحلہ وار 250 بلین ڈالر عطیہ کرچکا ہے، بل گیٹس کی پوری توجہ ایسی دوا تیار کرنے پر مرکوز ہے جو وبائی مرض کا علاج کرسکے۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے بل گیٹس کے تعاون سے ممکنہ کروناویکسین ایک سال کے اندر تیار ہوجائے گی۔

کروناویکسین کتنے ماہ میں تیار ہوگی؟ بل گیٹس نے بتا دیا

خیال رہے کہ حالیہ بیان میں بانی مائیکروسافٹ کا کہنا تھا کہ وبائی مرض کے خلاف پیشگی کوئی تیاری نہیں تھی جس کے باعث مسائل میں اضافہ ہورہا ہے، علاج کے دریافت میں وقت ناگزیر ہے، عام طور پر ویکسین کی تیاری میں 5 سے 6 سال لگتے ہیں لیکن کرونا کی سنگینی کو دیکھتے ہوئے ویکسین کی تیاری تیزی سے جاری ہے۔

انہوں نے یہ بھی کہا تھا کہ وبا کے خلاف جنگ میں مال ودولت کی کوئی اہمیت نہیں، دنیا بھر میں خوشی سے عطیات دے رہا ہوں، میری فنڈنگ تنظیم اور مجھ سے جو ممکن ہوسکا کرتے رہیں گے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں