The news is by your side.

Advertisement

ماسک نہ لگانے کی وجہ پوچھنے پر افسر آپے سے باہر، معذور خاتون پر بہیمانہ تشدد

نئی دہلی : بھارت میں ڈپٹی مینیجر کو ماسک پہنو کہنا معذور خاتون کا جرم بن گیا، درندہ صفت شخص نے معذور خاتون کو آہنی راڈ سے تشدد کا نشانہ بنایا۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق ظلم و بربریت کی داستان بھارتی ریاست آندھرا پردیش میں رقم ہوئی جہاں ایک سرکاری افسر نے اپنی خاتون ملازم کو بری طرح تشدد کا نشانہ بنایا، جس کی ویڈیو سوشل میڈیا پر بھی وائرل ہوگئی۔

دنیا بھر میں کرونا وائرس کا پھیلاو روکنے اور محفوظ رہنے کےلیے سماجی دوری اختیار کرنے اور عوامی مقامات و دفاتر میں ماسک پہننے کا کہا گیا ہے، لیکن بھارت میں سرکاری افسر کو ماسک پہننے کا کہا تو وہ بربریت پر اتر آیا۔

واقعہ کچھ یوں پیش آیا کہ محکمہ سیاحت میں ملازمت کرنے والی معذور خاتون نے کرونا کے باعث اپنے ڈپٹی مینیجر سے ماسک پہننے کا کہا تھا جس پر وہ طیش میں آگیا اور خاتون کو بالوں سے پکڑ کر گھیسٹنے لگا اور آہنی راڈ سے تشدد کا نشانہ بنانے لگا۔

دفتر میں موجود دیگر لوگوں نے بھاسکر نامی سرکاری افسر کو معذور خاتون پر ظلم کرتا دیکھا تو خاتون کی مدد کو ڈورے اور درندہ صفت انسان سے خاتون کی جان چھڑائی۔

سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی ویڈیو میں بھی دیکھا جاسکتا ہے کہ بھاسکر نامی سرکاری افسر نے ماسک نہیں پہنا ہوا۔

پولیس نے خاتون کی شکایت پر مذکورہ شخص کو گرفتار کرکے معذور خاتون ملازم کو تشدد کا نشانہ بنانے، احتیاطی تدابیر کی خلاف ورزی کرنے سمیت متعدد دفعات تحت مقدمہ درج کرلیا۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں