The news is by your side.

Advertisement

بھارت میں ہندو انتہاپسندوں کا مسلمان بزرگ پر بدترین تشدد

نئی دہلی : بھارت میں ہندو توا کے شرپسندوں نے ساٹھ سالہ مسلمان بزرگ کو بہیمانہ تشدد کا نشانہ بنا ڈالا۔

غیرملکی میڈیا رپورٹ کے مطابق مسلمان بزرگ شہری پر تشدد کا افسوس ناک واقعہ بھارتی ریاست بہار کے ضلع کیمور میں 15 مئی کی شام اس وقت پیش آیا جب حافظ محمد شمیم اپنے گھر کی طرف جارہے تھے۔

اسی دوران درگاہ چوک پر چھپے ہندو شرپسندوں نے بزرگ شہری کو گھیر کر بدترین تشدد کا نشانہ بنانے لگے۔

ملزمان میں سے ایک شخص نے حافظ محمد شمیم کو قتل کرنے کی بات تو متاثرہ بزرگ کسی طرح جان بچاکر بھاگ نکلے اور پولیس اسٹیشن پہنچ گئے۔

پولیس اہلکاروں نے بزرگ شہری کی شکایت درج کرنے کے باوجود ملزمان کے خلاف تاحال کوئی کارروائی نہیں کی۔

متاثرہ بزرگ پر تشدد سے متعلق بہار حکومت میں اقلیتی امور کے وزیر محمد زمان خان نے کہا کہ 60 سالہ مسلمان پر تشدد کے معاملے پر ایس پی سے بات کروں گا اور اس معاملے کو انجام دینے والے شرپسندوں کے خلاف ضرور کارروائی بھی کرواوں گا۔

خیال رہے کہ اس سے قبل ریاست مدھیہ پردیش میں ہندو شرپسندوں نے گائے کا گوشت لے جانے کا الزام لگا کر خاتون سمیت تینوں مسلمانوں پر بدترین تشدد کیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں