The news is by your side.

Advertisement

ایک شخص کے لیےآئین میں تبدیلی آئین کےساتھ مذاق ہے‘ خورشیدشاہ

اسلام آباد: قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف خورشید شاہ کا کہنا ہے ایک شخص کے لیے قانون سازی پارلیمنٹ کی افادیت کو کم کرتی ہے۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد میں پارلمینٹ ہاؤس میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے اپوزیشن لیڈر خورشید شاہ نے کہا کہ ایک شخص کے لیےآئین میں تبدیلی آئین کےساتھ مذاق ہے۔

خورشید شاہ نے کہا کہ ذاتی مفاد کے لیے پارلیمنٹ کا استعمال نہیں ہونا چاہیے، انہوں نے کہا کہ ایک شخص کیلئے قانون سازی پارلیمنٹ کی افادیت کو کم کرتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ جن کی وجہ سےسینیٹ میں بل منظورہوا وہ مصنوعی واویلا کررہے ہیں، بل کی سینیٹ سےمنظوری پرپی ٹی آئی ، ایم کیوایم کی تحقیقات ہونی چاہیے۔


تحریک انصاف نےمتحدہ اپوزیشن کوتوڑدیا ہے‘ خورشید شاہ


خورشید شاہ کا کہنا تھا کہ پاکستان تحریک انصاف، ایم کیو ایم نے سینیٹ میں غلطی چھپانے کے لیے کل احتجاج کیا۔ انہوں نے کہا کہ 3 بار رابطہ کرنے پربھی پی ٹی آئی نےچیئرمین نیب کے لیے نام نہیں دیے۔

اپوزیشن لیڈر خورشید کا کہنا تھا کہ ایم کیو ایم سے بھی رابطہ کرنے کےباوجود نام نہیں دیےگئے، پی ٹی آئی اور ایم کیو ایم نام نہ دیں تو میں رک نہیں سکتا۔

خورشید شاہ کا کہنا تھا کہ چیئرمین نیب کے لیے وزیراعظم سے آج ملاقات میں ناموں کا تبادلہ ہوگا،چیئرمین نیب کا تقرر 8 اکتوبر سے پہلےکرلیا جائے گا۔


نوازشریف بلامقابلہ مسلم لیگ ن کے صدر منتخب


واضح رہے کہ پاناما کیس کے فیصلے کے بعد نا اہل ہونے والے سابق وزیراعظم نوازشریف مسلم لیگ ن کے بلا مقابلہ صدر منتخب ہوگئے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں