The news is by your side.

Advertisement

یاسین ملک کو اسپتال سے جیل منتقل کردیا گیا

سرینگر : معروف حریت پسند رہنما یاسین ملک کو علاج مکمل کیے بغیر اسپتال سے سینٹرل جیل منتقل کردیا گیا ہے حریت رہنما غلط انجیکشن لگنے کے باعث چھ روز قبل تشویشناک حالت میں اسپتال لائے گئے تھے۔

تفصیلات کے مطابق مقبوضہ کشمیر میں جموں وکشمیر لبریشن فرنٹ کے زیر علاج چیئرمین محمد یاسین ملک کو بھارتی پولیس نے دوبارہ اسپتال سے سینٹرل جیل منتقل کردیا ہے،وہ صورہ اسپتال میں غلط انجیکشن لگنے کے باعث زیر علاج تھے۔

غیر ملکی ذرائع ابلاغ کے مطابق جموں وکشمیر لبریشن فرنٹ کے ترجمان نے سرینگر میں ایک بیان میں کہا کہ محمد یاسین ملک کو 22اکتوبر کو سخت علالت کے بعد ہسپتال میں داخل کیا گیا تھا تا ہم ان کا علاج مکمل کرائے بغیر واپس جیل بھیج دیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ حریت رہنما یاسین ملک کو ممتاز جواں سال حریت لیڈر برہاب وانی کی بھارتی فوج کے زیر حراست شہادت پر احتجاج کرنے کے جرم میں جولائی کے آخری دنوں میں نظر بند اور پھر حراست میں لے لیا گیا تھا۔

دوران حراست یاسین ملک کی صحت خطرناک حد تک بگڑ گئی تھی جس کے بعد انہیں جیل سے اسپتال منتقل کردیا گیا تھا تا ہم ان کے اہل خانہ کو اس سے آگاہ نہیں کیا گیا تھا۔

انسانی حقوق کی تنظیموں اور حریت رہنما کے اہل خانہ نے یاسین ملک کی فوری رہائی کا مطالبہ کرتے ہوئے بھارتی فوج کو غیر انسانی سلوک کی مذمت کی ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں