The news is by your side.

Advertisement

’عورت کہنے پر علیشبہ غصے میں آگئیں‘

اے آر وائی ڈیجیٹل کے ڈرامہ سیریل ’یہ نہ تھی ہماری قسمت‘ میں علیشبہ (عائزہ اعوان) عورت کہنے پر غصے میں آگئیں۔

اے آر وائی ڈیجیٹل کے ڈرامہ سیریل ’یہ نہ تھی ہماری قسمت‘ کی گزشتہ روز ساتویں قسط نشر کی گئی جس کے ایک سین کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہورہی ہے۔

ڈرامے میں حرا مانی (منتہا)، منیب بٹ (ایان)، عائزہ اعوان (علیشبہ) اور نور الحسن (یاسر) کا کردار نبھا رہے ہیں، ڈرامے کی کہانی میں کزن کے درمیان ہونے والی شادی کے بعد تعلقات میں اتار چڑھاؤ کو دکھایا گیا ہے۔

گزشتہ قسطوں میں دکھایا گیا کہ ایک حادثے کی وجہ سے یاسر کی شادی منتہا سے ہونے کی بجائے کزن ایان سے ہوجاتی ہے جبکہ علیشبہ کی شادی یاسر کے ساتھ کردی جاتی ہے۔

ڈرامے کی ساتویں قسط کے ایک سین کی ویڈیو وائرل ہورہی ہے جس میں علیشبہ سے شوہر یاسر کہتے ہیں کہ دیر ہوگئی ہے اٹھ جاؤ امی ناشتہ بنا چکی ہوں گی اس پر علیشبہ کہتی ہیں کہ ہاں تو کیا ہوا آپ کی پھوپھو اور ان کی بیٹی کس مرض کی دوا ہیں ادھر ہی رہتی ہیں تو وہ کاموں میں ہاتھ نہیں بتا سکتیں۔

علیشبہ کہتی ہیں کہ میری شادی کو ابھی دن ہی کتنے ہوئے ہیں، یاسر کہتے ہیں کہ علیشبہ تمہارا یہ جملہ بہت ہی پرانا ہوچکا ہے، وہ کہتی ہیں کہ مجھے کیا پتا تھا کہ شادی کے بعد اتنی ذمہ داریاں میرے کاندھوں پر آجائیں گی۔

وہ کہتی ہیں کہ دیکھنا روز کے یہی ڈرامے ہوں گے سب کے لیے اٹھو اور ناشتہ بناؤ، خدمتیں کرو یہی کرتی رہوں گی میں۔

یاسر کہتے ہیں کہ گھر کی ساری عورتیں یہی کرتی ہیں، اس پر علیشبہ غصے میں کہتی ہیں کہ عورتیں؟ عورت لگتی ہوں میں آپ کو میں صرف 20 سال کی ہوں۔

علیشبہ مزید کہتی ہیں کہ ان سارے کاموں کا منتہا کو شوق تھا آپ اسی سے شادی کرلیتے، یاسر کہتے ہیں کہ کیسے کرلیتا منتہا سے شادی جب قسمت میں تم ہی تھیں۔

ڈرامے میں مزید کیا ہونے جارہا ہے؟ یہ سب جاننے کے لیے ڈرامہ سیریل ’یہ نہ تھی ہماری قسمت‘ پیر سے جمعرات رات 9 بجے دیکھنا نہ بھولیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں