The news is by your side.

Advertisement

یوم استحصال کشمیر: برطانوی شہری بینرز تھامے گھروں سے نکل آئے

لندن : برطانوی حکومت نے کرونا وائرس کو بنیاد بناکر پریڈ فورڈ اور مانچسٹر میں یوم استحصال کے موقع پر ہونے والے مظاہرے روک دئیے۔

تفصیلات کے مطابق گزشتہ سال 5 اگست کے یکطرفہ ظالمانہ اور غیر قانونی بھارتی اقدام کو ایک سال مکمل ہونے پر مقبوضہ کشمیر سے اظہار یکجہتی کےلیے برطانیہ میں ہونے والے مظاہروں کی اجازت روک دی گئی۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ مظاہرین بھارتی چہرہ بے نقاب کرنے کےلیے بینرز لے کر باہر آگئے۔

ذرائع کے مطابق مقبوضہ کشمیر کی حمایت میں نکلنے والے مظاہرین چوکوں اور چوراہوں پر بینرز لے کر کھڑے ہوئے، مظاہرین کی جانب سے برطانوی شہر بریڈ فورڈ کے 20 مقامات پر بینرز لیے احتجاج کیا گیا۔

واضح رہے کہ گزشتہ سال 5 اگست کے یک طرفہ ظالمانہ اور غیر قانونی بھارتی اقدام کو ایک سال مکمل ہونے پر مقبوضہ کشمیر، آزاد کشمیر اور پاکستان میں آج ”یوم استحصال“ منایا جا رہا ہے، اس سلسلے میں آج پورے پاکستان میں ایک منٹ کی خاموشی اختیار کی جائے گی، اور دنیا بھر میں مودی سرکار کی طرف سے مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کرنے کی مذمت اور مظلوم کشمیریوں سے اظہار یک جہتی کیا جائے گا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں