The news is by your side.

Advertisement

کرونا ایمرجنسی کے پیش نظر 5 ہزار ہیلتھ ورکرز کی تربیت کی،ظفر مرزا

اسلام آباد: وزیر اعظم کے معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر ظفر مرزا نے کہا کہ کرونا ایمرجنسی کے پیش نظر 5 ہزار ہیلتھ ورکرز کی تربیت کی ہے۔

تفصیلات کے مطابق خالد مگسی کی زیرصدارت قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی صحت کا اجلاس ہوا جس میں معاون خصوصی ظفرمرزا نے کورونا،حکومتی اقدامات پر بریفنگ دی۔

ڈاکٹر ظفر مرزا کا کہنا تھا کہ معاشی صورتحال کے پیش نظرمکمل لاک ڈاؤن ممکن نہیں،حکومت نےفریقین کی مشاورت سے اسمارٹ لاک ڈاؤن کیا،اسمارٹ لاک ڈاؤن زیادہ کیسز والے علاقوں میں لگایا ہے،ملک بھرمیں 500علاقوں میں اسمارٹ لاک ہے۔

اجلاس میں بریفنگ دیتے ہوئے معاون خصوصی برائے صحت نے کہا کہ حکومت نے کرونا کا پھیلاؤ روکنے کے لیے ایس او پیز تشکیل دیے،مقامی انتظامیہ کے ذریعے کرونا ایس اوپیز پر عمل جاری ہے۔

ظفر مرزا کا کہنا تھا کہ حکومت وینٹی لیٹرز کا انتظام کر رہی ہے،رواں ماہ کے اختتام تک مزید1 ہزار وینٹی لیٹرز دستیاب ہوں گے۔انہوں نے بریفنگ کے دوران بتایا کہ کرونا ایمرجنسی کے پیش نظر 5 ہزار ہیلتھ ورکرز کی تربیت کی۔

ملک میں کرونا کے 11 لاکھ ٹیسٹ، 1 لاکھ 81 ہزار مثبت، 3590 افراد جاں بحق

واضح رہے کہ گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران ملک میں 4,471 نئے کیسز سامنے آئے، نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر کی جانب سے جاری اَپ ڈیٹ کے مطابق نئے اور مہلک وائرس کو وِڈ نائنٹین سے پاکستان بھر میں 181,088 افراد متاثر ہو چکے ہیں، جبکہ اموات کی تعداد 3,590 ہو گئی ہے۔

ملک کے مختلف شہروں میں اس وقت کرونا کے زیر علاج مریضوں کی تعداد 1 لاکھ 6 ہزار 40 ہے، جبکہ اب تک 71,458 مریض وائرس سے لاحق ہونے والی بیماری سے صحت یاب ہو چکے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں