The news is by your side.

Advertisement

جیکٹ کے بٹنز نے زینب کے قاتل تک پہنچنےمیں مدددی ، بی بی سی

لندن : برطانوی نشریاتی ادارے کا کہنا ہے کہ ملزم کی جیکٹ کے بٹنز نے زینب کے قاتل عمران تک پہنچنےمیں مدددی اور ملزم کی والدہ نے بھی گرفتاری میں پولیس کاساتھ دیا۔

تفصیلات کے مطابق بی بی سی کی رپورٹ کے مطابق سی سی ٹی وی فوٹیج میں ملزم عمران نے زپ والی جیکٹ پہن رکھی تھی، جس کے دونوں کندھوں پردوبڑے بٹن لگے تھے، عمران کے گھرکی تلاشی میں ملنے والی جیکٹ پرلگے دوبڑے بٹنوں کی مددسے ملزم کی گرفتاری میں مدد ملی۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ ملزم عمران نے پانچ بچیوں کو زیر تعمیر گھروں میں زیادتی اور پکڑے جانے کے ڈرسے گلاگھونٹ کرقتل کرنے کا اعتراف کیا۔

برطانوی نشریاتی ادارے کے مطابق عمران کے ڈی این اے کی تصدیق کے بعد عمران کی والدہ نے گرفتاری میں مدد دی۔

بی بی سی کا کہنا ہے کہ پولیس کی توقع کے برعکس ملزم زیادہ چالاک اور ہوشیار نہیں، پہلے قتل کی سنجیدگی سے تحقیقات کی جاتیں تومعاملہ اتنا سنگین نہیں ہوتا، پولیس حکام کے مطابق عمران سیریل کلر اور سیریل پیڈوفائل ہے

رپورٹ کے مطابق تحقیقاتی اداروں نےگیارہ سوپچاس افراد کےڈی این اے ٹیسٹ کئے اور گیارہ سوآٹھواں ڈی این اے ٹیسٹ ملزم سے سوفیصد میچ کرگیا، جبکہ آئی جی پنجاب ملزم کی گرفتاری کیلئےخوداس کےگھرگئےاورتلاشی لی۔


مزید پڑھیں : زینب قتل کیس کا مرکزی ملزم عمران گرفتار


یاد رہے گذشتہ روز  زینب قتل کیس کے مرکزی ملزم عمران کو گرفتار کیا گیا تھا ، ملزم عمران زینب کے محلہ دار تھا،  پولیس نے مرکزی ملزم عمران کو پہلے زینب کے قتل کے شبہ میں ملزم کو حراست میں لیا تھا، لیکن زینب کے رشتے داروں نے اس شخص کو چھڑوا لیا تھا، ملزم رہائی کے بعدغائب ہوگیا تھا، تاہم اب ڈی این اے میچ ہوجانے کے بعد پولیس نے ملزم کو دوبارہ گرفتار کرلیا۔

پولیس افسران کےمطابق ملزم نےتفتیشں کے دوران سارے قتل اورجرائم کا اعتراف کرلیا ہے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں