The news is by your side.

Advertisement

یوکرینی صدر کا ہالی ووڈ ہیرو سے موازنہ

یوکرین کے صدر ولودیمیر زیلنسکی کا ہالی ووڈ ہیرو ٹام ہینکس سے موازنہ کیا جانے لگا ہے۔

24 فروری کو یوکرین پر روسی حملہ شروع ہونے کے بعد سے جس طرح یوکرینی صدر نے اپنے مؤقف پر ڈٹے رہنے کا مظاہرہ کیا ہے، اس پر پوری دنیا میں ایک طرف زیلنسکی کی تعریف کی جا رہی ہے اور دوسری طرف تنقید بھی۔

تاہم یوکرین جنگ کے دوران ‘نڈر’ ٹام ہینکس سے ان کا موازنہ بھی کیا گیا ہے، زیلنسکی پہلے ایک اداکار تھے اور پھر وہ سیاست دان بنے، اب ملک پر روس کے مسلسل حملوں کے درمیان جنگ کے وقت وہ ایک ‘رہنما’ بننے کی کوشش کر رہے ہیں۔

انھیں اس بحران کے درمیان ملک سے نکلنے کی پیش کش بھی ہوئی، لیکن 2 بچوں کے باپ زیلنسکی نے اپنی زمین چھوڑنا گوارا نہیں کیا، اور اپنی آخری سانس تک لڑنے کا عہد کیا۔

صدر زیلنسکی اور ان کے فلم ساز دوست ڈیوڈ ڈوڈسن

انھوں نے اس ہفتے کے شروع میں یو کے ہاؤس آف کامنز کو ایک ویڈیو خطاب میں کہا ہم آخر تک لڑیں گے۔ ہاؤس آف کامنز نے خطاب کے بعد انھیں کھڑے ہو کر خراج تحسین پیش کیا۔ زیلنسکی نے کہا ہم اپنی سرزمین کے لیے لڑتے رہیں گے، چاہے کوئی بھی قیمت ادا کی جائے۔

اب لاس اینجلس میں ان کے دیرینہ فلم ساز دوست اور ساتھی ڈیوڈ ڈوڈسن نے زیلنسکی کی ‘بہادری’ پر کہا کہ وہ خطاب پر حیران نہیں ہوئے، جسمانی طور پر ولودیا کوئی لمبا آدمی نہیں ہے، جیسا کہ 5 فٹ 6 انچ یا 3 انچ، لیکن وہ کردار میں یادگار ہیں، اور وہ ہمیشہ سے نڈر رہا ہے۔

ڈوڈسن نے کہا زیلنسکی یوکرین کا ٹام ہینکس تھا، اور وہ روس میں بھی بڑی شہرت رکھتے تھے، وہاں کسی نے بھی انھیں ولن نہیں سمجھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں