The news is by your side.

Advertisement

بلوچستان اہم صوبہ ہے اس لیے دشمن نشانہ بنا رہے ہیں: وزیر داخلہ بلوچستان

کوئٹہ: بلوچستان کے وزیر داخلہ ضیا اللہ لانگو کا کہنا ہے کہ کوئٹہ دھماکے میں مخصوص کمیونٹی کو نشانہ نہیں بنایا گیا، بلوچستان اہم صوبہ ہے اس لیے دشمن نشانہ بنا رہے ہیں۔ دشمن نہیں چاہتا بلوچستان میں امن ہو۔

تفصیلات کے مطابق صوبہ بلوچستان کے وزیر داخلہ ضیا اللہ لانگو نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ کوئٹہ ہزار گنجی میں دھماکہ خودکش تھا، دھماکے میں 20 افراد جاں بحق اور 48 زخمی ہوئے ہیں۔ اسپتالوں کا دورہ کیا ہے اور زخمیوں کی صورتحال دیکھی۔

انہوں نے کہا کہ تحقیقات سے لگتا ہے کہ مخصوص کمیونٹی کو نشانہ نہیں بنایا گیا، بلوچستان اہم صوبہ ہے اس لیے دشمن نشانہ بنا رہے ہیں۔ مستقبل میں بلوچستان اہم حیثیت اختیار کر چکا ہے، دشمن نہیں چاہتا بلوچستان میں امن ہو۔

وزیر داخلہ کا کہنا تھا کہ دشمنوں کو بلوچستان میں ناکام کردیں گے، دہشت گردوں کو کیفر کردار تک پہنچائیں گے۔ پاکستان خطے کا اہم ملک بننے جا رہا ہے، دشمن کی کوشش ہے پاکستان میں بد امنی کی جائے۔

انہوں نے مزید کہا کہ حالیہ صورتحال کے پیش نظر ایک خصوصی اجلاس بلایا جائے گا۔

خیال رہے کہ صوبائی دارالحکومت کوئٹہ میں آج صبح ہزار گنجی فروٹ مارکیٹ کے قریب دھماکہ ہوا تھا جس کے نتیجے میں 16 افراد جاں بحق اور 30 زخمی ہوگئے۔

ڈی آئی جی کے مطابق دھماکہ خیز مواد آلوؤں میں رکھا گیا تھا، جاں بحق افراد میں سیکیورٹی اہلکار بھی شامل ہے جبکہ 8 جاں بحق افراد کا تعلق ہزارہ کمیونٹی سے ہے۔

وزیر اعظم عمران خان نے کوئٹہ دھماکے کی سخت مذمت کرتے ہوئے زخمیوں کو بہترین طبی امداد فراہم کرنے کی ہدایت کی ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں