The news is by your side.

Advertisement

ایوارڈ کے لیے گریڈنگ کرنے والوں پر زلفی بخاری نے بھی سوال اٹھا لیا

مانچسٹر: شاہ محمود قریشی کے بعد وزرا کو ایوارڈ کے لیے گریڈنگ کرنے والوں پر زلفی بخاری نے بھی سوال اٹھا لیا ہے، انھوں نے کہا جن لوگوں نے ایوارڈ کے لیے گریڈنگ کی ہے اُن کو سامنے آنا چاہیے۔

تفصیلات کے مطابق تحریک انصاف کے مارچ میں اوورسیز پاکستانیوں کے پاور شو کی تیاریوں اور کارکنوں کو متحرک کرنے کے لیے زلفی بخاری برطانوی شہر مانچسٹر پہنچ گئے ہیں، انھوں نے مانچسٹر میں نجی ہوٹل میں عوامی جلسے خطاب کیا جس میں پاکستانیوں کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔

وزیر اعظم عمران خان کے سابق معاون خصوصی برائے اوورسیز پاکستانیز زلفی بخاری نے صحافیوں سے گفتگو میں کہا حماد اظہر بہت محنت کر رہے ہیں اُن کو ایوارڈ ملنا چاہیے تھا،شاہ محمود قریشی پاکستان کے سب سے بہترین وزیر خارجہ ہیں، جن لوگوں نے بھی ان ایوارڈ کے لیے گریڈنگ کی ہے اُن کو سامنے آنا چاہیے۔

شاہ محمود قریشی حکومت سے ناراض ہوگئے

زلفی کا کہنا تھا مجھے نہیں معلوم کہ ان لوگوں کو ایوارڈ کیوں نہیں دیے گئے، مراد سعید، ثانیہ نشتر، شیریں مزاری کو ایوارڈ ملے، میں انھیں مبارک باد دیتا ہوں۔

اپنے عہدے کے بارے میں ایک سوال کے جواب میں انھوں نے کہا میں خان صاحب کی ٹیم کا حصہ ہوں، اس کے لیے عہدہ ہونا لازمی نہیں ہے، میں خود انتخابی سیاست میں جا رہا ہوں، 18 ماہ بعد انتخابات ہیں اور مہم کا آغاز ابھی سے کر رہے ہیں۔

زلفی بخاری نے اطلاع دی کہ عمران خان اس سال گرمیوں میں برطانیہ کا دورہ کریں گے، میں ابھی برطانیہ میں پاکستانی کمیونٹی سے ملنے آیا ہوں، حکومت کا حصہ ہوں یا ناں ہوں اورسیز پاکستانیوں کا نمائندہ رہوں گا، میری آمد کا مقصد اوورسیز کمیونٹی کو ووٹنگ رجسٹریشن کے حوالے سے آگاہ کرنا ہے، ایک کروڑ اوورسیز ووٹرز کا ووٹ آئندہ انتخابات میں فیصلہ کُن ہوگا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں