بوتلوں کی جعلی رپورٹ : سندھ لیبارٹری کے چیف ایگزامنر ڈاکٹر زاہد انصاری معطل -
The news is by your side.

Advertisement

بوتلوں کی جعلی رپورٹ : سندھ لیبارٹری کے چیف ایگزامنر ڈاکٹر زاہد انصاری معطل

کراچی : شرجیل میمن کی شراب کی بوتلوں کی جعلی رپورٹ تیار کرنے پر سندھ لیبارٹری کے چیف ایگزامنر، پیتھالوجسٹ اور ڈائریکٹر ڈاکٹر زاہد انصاری کو عہدے سے معطل کردیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق سندھ حکومت نے اے آر وائی نیوز کی خبر کا نوٹس لیتے ہوئے شرجیل میمن کی شراب کی بوتلوں کا کیمیکل معائنہ کرنے والے چیف کیمیکل ایگزامنر سندھ لیبارٹری ڈاکٹر زاہد انصاری کو معطل کردیا۔

اس حوالے سے محکمہ سروسز جنرل ایڈمنسٹریشن نے نوٹی فکیشن جاری کردیا ہے جس کے مطابق ڈاکٹر زاہد انصاری کو محکمہ صحت میں رپورٹ کرنے کا حکم دیا گیا ہے۔

سندھ حکومت کے نوٹی فکیشن کے مطابق ڈاکٹر زاہد انصاری نے غیر روایتی طریقہ کار کے تحت کیمیکل معائنہ کیا جس کے بعد انہیں چیف کیمیکل ایگزامنر کے عہدے سے معطل کردیا گیا ہے جب کہ انہیں سیکریٹری سندھ بلڈ ٹرانسفیوژن اتھارٹی کے عہدے سے بھی ہٹا دیا گیا ہے۔

مزید پڑھیں: شرجیل میمن کے کمرے سے ملنے والی بوتلوں کی ایگزامن رپورٹ مسترد

علاوہ ازیں شرجیل میمن کیس میں دو جیلروں کو معطل کردیا گیا، معطل افسران میں اسسٹنٹ سپرنٹنڈنٹ مجاہد خان اور نسیم شجاع شامل ہیں، دونوں افسران کو سب جیل میں لاپرواہی برتنے پر معطل کیا گیا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں