The news is by your side.

Advertisement

اٹلی میں کرونا کی دوسری لہر نے تباہی مچا دی، دل دہلا دینے والی تصاویر

روم: اٹلی میں کرونا وائرس کی دوسری لہر نے صحت کا نظام درہم برہم کردیا، مریضوں کے علاج کے لیے اسپتالوں میں جگہ کم پڑگئی، متاثرین کی روم کے باہر دیکھ بھال کی جارہی ہے۔

غیرملکی خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق اٹلی کے ریجن ‘پائیمونٹ’ کے ایک اسپتال میں کرونا مریضوں کے لیے بستر کم پڑگئے، انتظامیہ نے روم کے باہر علاج کرنا شروع کردیا، کئی مریض کوریڈور میں اسٹریچر پر پڑے ہیں۔

رپورٹ کے مطابق منظر عام پر آنے والی تصاویر میں دیکھا جاسکتا ہے کہ مریضوں کی کمرے کے باہر کیا حالت ہے، متعدد وینٹی لیٹرز کے مریض بھی روم کے باہر کوریڈور میں نظر آرہے ہیں۔

اٹلی میں دیگر اسپتالوں میں بھی مریضوں کو اسٹریچر پر آکسیجن دیا جارہا ہے۔

These are the tragic scenes as coronavirus patients in Italy are being treated on stretchers in a corridor of an over-crowded hospital

کرونا کی دوسری لہر سے پائیمونٹ ریجن زیادہ متاثر ہے۔ اطالوی حکومت نے وبائی صورت حال کے پیش نظر نئے پیکج کی بھی منظوری دی ہے۔ اٹلی میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ریکارڈ 39 ہزار 811 نئے کرونا کیسز رپورٹ ہوئے۔

Italy today reported almost 40,000 new coronavirus infections as the country is gripped by a

اس سے قبل 37 ہزار 809 کرونا کیسز کو سب سے زیادہ قرار دیا تھا لیکن نئی رپورٹ نے ریکارڈ توڑ دیا۔

Italian health authorities have reported more than 800 deaths over the past 48 hours

محکمہ صحت کے مطابق گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران کرونا کے 425 مریضوں کی اموات ہوئیں جو 446 کے مقابلے میں کم ہے۔ اٹلی میں اب تک 41 ہزار 60 مریض ہلاک ہوچکے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں