The news is by your side.

Advertisement

ترکی نے امریکا و نیٹو کو صاف انکار کر دیا

ترکی نے افغانستان میں ایئرپورٹ کی سیکیورٹی کیلئےمزید فوج نہ بھیجنےکا اعلان کر دیا۔

ترک وزیردفاع پلوسی آکار نے دوٹوک اعلان کیا ہے کہ کابل ایئرپورٹ کی سیکیورٹی کیلئےمزید فوج ‏نہیں بھیجیں گے۔

انہوں نے کہا کہ مشن کیلئےلاجسٹک اورمالی مدد پر امریکا سے بات جاری ہے اور جمعرات کو ‏امریکی وفد کے ساتھ معاملے پر تبادلہ خیال کیا جائے گا۔

ترک وزیردفاع نے واضح کیا کہ ترکی6 سال تک ایئرپورٹ کی سیکیورٹی مشن کےتحت موجودگی ‏رکھے گا اور نیٹومشن کے تحت ہمارے 500 فوجی افغانستان میں موجود ہیں۔

ترکی اور نیٹو کےدرمیان روس سےدفاعی سازوسامان خریدنے پر تعلقات تناؤ کا شکار ہیں۔ نیٹو کے ‏انخلا کے بعد ترکی نے کابل ایئرپورٹ کی سیکیورٹی کی پیشکش کی تھی۔

گزشتہ ہفتے امریکی مشیرقومی سلامتی امور نے بتایا تھا کہ نیٹو سمٹ کے موقع پر ہونے والی ‏ملاقات میں اتفاق کیا تھا کہ حامدکرزئی ایئرپورٹ سے نیٹو اور امریکی فورسز کے بحفاظت انخلا ‏اور بعد میں سیکورٹی میں ترکی کلیدی کردار ادا کرے گا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں