الیکشن کمیشن اور نادرا نے ہرحلقے میں ووٹوں کی تصدیق ممکن قرار دے دی -
The news is by your side.

Advertisement

الیکشن کمیشن اور نادرا نے ہرحلقے میں ووٹوں کی تصدیق ممکن قرار دے دی

اسلام آباد: الیکشن کمیشن اور نادرا نے ہرحلقے میں ووٹوں کی تصدیق ممکن قرار دے دی، الیکشن کمیشن کو با اختیار بنا نے کے لئے سمری تیار کر لی گئ، منظوری کے بعد الیکشن کمیشن آزادانہ حلقہ بندیاں کر سکے گا۔

انتخابی اصلاحاتی کمیٹی کا اجلاس ہوا جس میں کئی باتوں پر اتفاق کیا گیا، انتخابی اصلاحاتی کمیٹی کے اجلاس میں نادرا حکام بولے نادرا کے لیے انگھوٹوں کے نشان کی تصدیق کوئی مسئلہ ہی نہیں، کسی بھی حلقے کے ووٹ کی تصدیق ممکن ہے ۔

سیکریٹری الیکشن کمیشن اشتیاق احمد نے کہا کہ سیاہی کوئی بھی استعمال ہو ووٹوں کی تصدیق ممکن ہے، ساتھ ہی انہوں نے شکوہ بھی کیا کہ ساڑھے سات لاکھ ریٹرننگ افسران کے خلاف شکایت پر الیکشن کمیشن کوئی کارروائی نہیں کر سکتا کیونکہ پارلیمنٹ نے قانون سازی ہی نہیں کی، ان کا کہنا تھا کہ آر اوز الیکشن کمیشن کے کنٹرول میں نہیں دیے گئے ۔

سیکریٹری الیکشن کمیشن نے بتایا کہ پرنٹنگ کارپویشن حکام نے تردید کی ہے کہ اردو بازار سے بیلٹ پیپرچھپوائے گئےالبتہ نمبرنگ کیلئے اڑتالیس لوگ بلائے گئے تھے۔ انہوں نے بتایا کہ ایک ایک بیلٹ پیپر کا حساب موجود ہے سیکرٹری الیکشن کمیشن نے بتایا کہ سیاسی جماعتوں کے مطالبے پرعدلیہ سے رٹیرننگ افسران لیئے گئے اور ان پر الیکشن کمیشن کے کنٹرول نہیں ۔ انہوں نے بتایا کہ مقناطیسی یا عام سیاسی کا کوئی مسلہ نہیں نادرا نے کبھی نہیں کہا کہ انگوٹھوں کے نشان کی تصدیق ممکن نہیں نادرا نظام قابل فہم انگوٹھوں کی تصدیق ہر وقت کر سکتا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں