The news is by your side.

Advertisement

ایمنسٹی انٹرنیشنل کی مودی سرکار پر کڑی تنقید

اسلام آباد: انسانی حقوق تنظیم ایمنسٹی انٹرنیشنل نے انسانی حقوق کی پامالی کے حوالے سے نریندرمودی کی حکومت کو شدید تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا ہے کہ بی جے پی کی حکومت بننے کے بعد بھارت میں فرقہ وارانہ فسادات میں اضافہ ہوا ہے۔

ایمنسٹی انٹرنیشنل کی سالانہ رپورٹ میں بھارت میں نریندرمودی کی حکومت پرشدید تنقید کی گئی، رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ بی جے پی کے حکومت میں آنے کے بعد سے فرقہ وارانہ فسادات اور اقلیتوں پر حملوں میں تیزی آئی ہے، خصوصا بھارتی ریاست اترپردیش میں مسلم کش فسادات بڑھ گئے ہیں۔

سالانہ رپورٹ کے مطابق مودی کے اقتدار سنبھالنے کے بعد باقاعدہ مہم چلا کرمسلمانوں اور ہندوؤں کو زبردستی ہندو بنایا جا رہا ہے جو کہ انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزی ہے، مودی حکومت اقلیتوں کو تحفظ فراہم کرنے میں کسی دلچپسی کا مظاہرہ نہیں کررہی۔

رپورٹ میں مزید کہا گیا ہے کہ بہت سی ریاستیں شہریوں کو تحفظ دینے میں ناکام رہیں۔ایک سال میں پانچ کروڑ افراد خانہ جنگی کے باعث بے گھر ہوئے۔ سیکورٹی کونسل قیام امن کی ذمہ داری پوری نہیں کرسکی۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ غزہ، شام، یوکرین، نائجیریا میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کا سلسلہ جاری ہے۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں