The news is by your side.

Advertisement

بھارتی فلم سنسربورڈ ’چیف‘ مستعفی

نئی دہلی : متنا زعہ فلم ’میسنجر آف گا ڈ ‘کو فلم سرٹیفیکیشن اپیلٹ ٹریبونل کی اجازت دینے کے بعد سنسر بورڈ کی چیف لیلا سیمسن نے مستعفی ہونے کا فیصلہ کیا ہے۔

مسزلیلاسیمسن نے کہا کہ میں جا نتی تھی کہ فلم کو دکھا نے کی اجازت مل جائے گی ۔ انہو ں نے مزید کہا سنٹرل بورڈ آف فلم سرٹیفیکیشن کے لئے ایک مذاق ہے، یہ فلم جمعہ کو ریلیز ہونے والی ہے۔

مسز سیمسن نے کہا کہ سنسر بورڈ کے تما م ممبران کی میعاد ختم ہوچکی ہے لیکن نئی حکو مت ابھی تک نئے بورڈ اورچیئرپرسن کے تقررمیں نا کا م ہوچکی ہے جبکہ چند ممبروں کی میعاد کوبڑھایاگیا ہے تا کہ طریقہ کارکو مکمل کیا جا سکے۔

ا سی دوران سرسا ( ہریانہ ) میں قا ئم ڈیرہ سچا سو دا کے ترجما ن نے بتا یا کہ فلم ’’میسنجر آ ف گا ڈ ‘‘کو ایف سی اے ٹی کی طر ف سے اجا زت مل گئی ہے اورفلم ریلیزکے لئے تیارہے لیکن ابھی تحریری آرڈر کاانتظارہے۔

’پی کے‘ تنازعہ

دریں اثناء بھارتی میڈیا سے موصول ہونے والی اطلاعات کے مطابق لیلانے الزام لگایا ہے کہ وزارتِ اطلاعات و نشریات ان کے معاملات میں مداخلات کرتی ہے اورفیصلوں پر نظر انداز ہونے کی کوشش کرتی ہے۔

اطالاعات کے مطابق ان کا کہنا تھا کہ عامرخان کی فلم ’پی کے‘پربھی انتہا پسند تنظیموں اوربورڈ کے کئی ممبران کی جانب سے دباؤ تھا کہ مناظرکاٹے جائیں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں