The news is by your side.

Advertisement

بے گناہ کارکنان کی گرفتاریاں بند کی جائیں، ایم کیو ایم رابطہ کمیٹی

کراچی : متحدہ قومی موومنٹ کی رابطہ کمیٹی نے پولیس اور دیگر قانون نافذ کرنیوالے اداروں کی جانب سے لیاقت آبادکے علاقے غریب آبادمیں بڑے پیمانے پر چھاپوں اورایم کیوایم کے کارکنوں اورہمدردوں کی گرفتاریوں کی شدیدمذمت کی ہے۔

ایک بیان میں رابطہ کمیٹی نے کہا کہ گزشتہ ہفتہ ایم کیوایم لیاقت آباد سیکٹر کے کارکن خرم کومسلح دہشت گردوں نے فائرنگ کرکے شہید کیا، جبکہ اورنگی ٹاؤن میں ایم کیوایم کے کارکن محمدعلی کوشہید کردیا گیا لیکن ان کے قاتلوں کو گرفتار نہیں کیاگیا بلکہ الٹاروزانہ ایم کیوایم کے کارکنوں کوگرفتارکیاجارہاہے۔

آج علی الصبح بھی لیاقت آبادکے علاقے غریب آبادمیں پولیس ورینجرزنے پورے علاقے کامحاصرہ کرکے ایم کیوایم کے کئی کارکنوں اورہمدردوں کوگرفتارکرلیا۔

جن میں یونٹ 158کے کارکنان شفیق صدیقی ولد عبد السلام ، زاہد اقبال ولد محمد اقبا ل ، ندیم عظیم ولد محمد عظیم ، شہزاد مرزا ولد عبد الرشید، افضال ولد مہر دین ، محمد صغیر ولد نور محمد ،محمد وسیم ولد محمد متین، محمد شوکت ولد محمد شاہ کوگرفتارکرلیا۔

رابطہ کمیٹی نے کہا کہ یونٹ158کے کارکن رئیس گھرپرنہ ملے توسرکاری اہلکاروں نے ان کے 13سالہ صاحبزادے محسن کوگرفتارکرلیا،جبکہ اسی طرح یونٹ 158کے ضعیف العمر ہمدرد70سالہ قمر الدین اور ہمدرد کمال کوبھی گرفتارکرلیا۔

رابطہ کمیٹی نے کہاکہ ایم کیوایم کے شہید کارکنوں کے قاتلوں کوگرفتارکرنے کے بجائے ایم کیوایم کے بے گناہ کارکنوں اورہمدردوں کی ان اندھا دھند گرفتاریوں اورچھاپوں سے صاف ظاہرہے کہ آپریشن کی آڑمیں ایم کیوایم کونشانہ بنایاجارہاہے اور ایم کیوایم کے کارکنوں اورذمہ داروں کوگرفتارکرکے جھوٹے مقدمات میں ملوث کیاجارہاہے۔

رابطہ کمیٹی نے مطالبہ کیاکہ بستیوں کے محاصروں اورایم کیوایم کے بے گناہ کارکنان ، ہمدردوں کی گرفتاریوں کا سلسلہ بندکیاجائے اورگرفتارشدگان کو فی الفوررہاکیاجائے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں