The news is by your side.

Advertisement

تھرمیں دو بچے غذائی قلت کے باعث دم توڑ گئے

مٹھی: غذائی قلت کے سبب دو اورمعصوم کلیاں مرجھا گئیں، تھرمیں ہونے والی ہلاکتوں کی تعداد 256 ہوگئی۔

تفصیلات کے مطابق تھرمیں غذائی قلت کے باعث ہلاکتوں کا سلسلہ جاری ہے اورمٹھی کے سول اسپتال میں دو معصوم بچے آج بھی زندگی کی بازی ہار گئے۔

ایک ماہ کی معصوم بچی جس کا تعلق چھاچھرو سے تھا سول اسپتال مٹھی میں زیرِ علاج تھی علی الاصبح دم توڑ گئی۔ گزشتہ رات بھی اسپتال میں ایک بچے کی ہلاکت ہوئی تھی۔

قحط سے متاثرہ علاقے تھرمیں غذائی قلت کا مسئلہ سنگین نوعیت اختیارکرچکاہے اور پیپلز پارٹی کی حکومت اب تک سوائے زبانی جمع خرچ کے کسی بھی قسم کے عملی اقدامات اٹھانے سے قاصرنظرآئی ہے۔

ڈاکٹروں نے متنبہ کیا ہے کہ اگر حاملہ خواتین کی نگہداشت کے لئے فوری اقدامات نہیں کئے گئے تو نوزائیدہ بچوں کی ہلاکتوں میں مزید اضافہ ہوسکتا ہے۔

صحرائے تھر پاکستان کے پسماندہ ترین علاقوں میں سے ایک ہے جہاں کے عوام زندگی کی بنیادی سہولیات سے بھی محروم ہیں اور قحط کے ساتھ نمونیا اور ڈائریا بھی نومولود بچوں کی بقا کے لئے ایک شدید خطرہ ہے

Comments

یہ بھی پڑھیں