The news is by your side.

Advertisement

لاہور:گھریلو ملازمہ کا قتل، تحقیقات نے نیا رخ اختیار کرلیا

لاہور کے علاقے فیصل ٹاؤن میں گھریلو ملازمہ کے قتل کی تحقیقات نے نیا رخ اختیار کرلیا، پولیس حکام کا کہنا ہے کہ مقتولہ گھریلو ملازمہ سے زیادتی کا شبہ ہے۔

پولیس کے مطابق لاہور میں پرسرار طور پر ہلاک ہونے والے گھریلو ملازمہ سے زیادتی کا شبہ ہے، فرانزک ٹیسٹ اور پوسٹ مارٹم رپورٹ آنے کے بعد حتمی فیصلہ ہوسکے گا۔

پولیس حکام کا کہنا ہے کہ گھر کے مالک اور اس کے تین بیٹوں کو گرفتار کیا گیا ہے، گھریلو ملازمہ کی ابتدائی پوسٹ مارٹم رپورٹ میں انکشاف کیا گیا تھا کہ عذرا کی موت خود کشی نہیں، عذرا کی موت گلا دبانے سے ہوئی۔

رپورٹ کے مطابق خودکشی کے شواہد نہیں ملے، گلا گھونٹنے کے واضح نشانات موجود ہیں، دو روز قبل فیصل ٹاؤن میں عذرا بی بی نامی چودہ سالہ ملزامہ کی لاش گھر کی دوسری منزل پر ملی تھی۔

ورثاء نے الزام عائد کیا ہے کہ اسے قتل کیا گیا جبکہ گھر کی مالکن کا کہنا تھا کہ عذرا پانچ روز کے بعد کام پر آئی تو کافی پریشان تھی، اس نے گھریلو پریشانی کی وجہ سے گلے میں پھندا ڈال کر خودکشی کی ہے۔
    

   

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں