مشرف کے ساتھ کسی میٹنگ میں شریک نہیں ہوا، فضل الرحمان -
The news is by your side.

Advertisement

مشرف کے ساتھ کسی میٹنگ میں شریک نہیں ہوا، فضل الرحمان

اسلام آباد: جمیعت علمائے اسلام ف کے سربراہ مولانا فضل الرحمن کا کہنا ہے کہ انہیں یاد نہیں کہ وہ کبھی جنرل پرویز مشرف کے حوالے سے کسی میٹنگ میں شریک ہوئے ہوں۔

خیرالمدارس میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا مولانا فضل الرحمن کا کہنا تھا کہ وہ حکومت کی کارکردگی سے مکمل طور پر مطمئن نہیں ہیں لیکن ہمیں چاہیئے کہ حکومت کو صحیح مشورے دیں انہوں نے کہا کہ ملک کے حالات تشویشناک ہیں ایسی صورتحال میں ضرورت اس بات کی ہے کہ ملک میں سیاسی استحکام ہو اور جمہوریت چلتی رہے، ان کا کہنا تھا کہ جب تک امریکہ کے اتحادی کہلائیں گے اس وقت تک امریکہ مخالف ذہن کو منتشر نہیں کیا جاسکتا، ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ طالبان کیساتھ مزاکرات کا معاملہ ڈرامہ تھا اور مذاکرات اور ڈرامے میں بڑا فرق ہوتا ہے،انہوں نے کہا کہ سوات آپریشن کے بعد دہشت گردوں نے جگہ چھوڑی تھی اور دہشت گردی ختم نہیں ہوئی تھی۔

ان کا کہنا تھا کہ عمران خان کے مارچ سے کوئی آسمان نہیں ٹوٹ جائے گا مظاہرے عوام کا حق ہیں تاریخ میں جتنے بڑے مارچ ہم نے کیے ہیں کوئی نہیں کرسکتا، بہرحال پی ٹی آئی کو مارچ کرنے دیا جائے، لیکن میں یہ سمجھتا ہوں کہ یوم آزادی کے دن اس طرح کے مظاہرے نہیں کرنے چاہیں ، انہوں نے کہا کہ غزہ کی صورتحال پر امت مسلمہ کو ایک ہونا چاہئے ، ایک سوال کے جواب میں ان کا کہنا تھا کہ جب تک اسٹیبلشمنٹ آئین کے تابع نہیں ہوتی اس وقت تک ملک میں ڈیل کی سیاست ختم نہیں ہوسکتی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں