چیف جسٹس نے انصاف نہ دیا تو خونی انقلاب کا راستہ کھل جائے،عمران خان -
The news is by your side.

Advertisement

چیف جسٹس نے انصاف نہ دیا تو خونی انقلاب کا راستہ کھل جائے،عمران خان

اسلام آباد: تحریکِ انصاف کے چیئرمین عمران خان نے دھرنے کے شرکاء سے خطاب میں کہا ہے کہ چیف جسٹس نے انصاف نہ دیا تو خونی انقلاب کا راستہ کھل جائے گا۔

عمران خان نے کہا ہے کہ گزشتہ چار روز سے پولیس دھرنے کے شرکاء کو پکڑ کر جیلوں میں بند کر رہی ہے، گزشتہ رات بھی تحریکِ انصاف کے جالیس کارکنوں کو حراست میں لیا گیا ہے۔

عمران خان نے چیف جسٹس ، ججز اور وکلاء سے اپیل کی کہ جہموریت بچائے، انھوں نے چیف جسٹس کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ جہموریت کو بچانا آب کی ذمہ داری ہے۔

عمران خان نے جمہوریت بچانے کے لئے چیف جسٹس کی خدمات کا مطالبہ کر دیا ہے، انکا کہنا تھا کہ ملک خانہ جنگی کی طرف بڑھ رہا ہے ، میرے لئے لوگوں کا روکنا مشکل ہورہا ہے، میرے لوگ پولیس سے مقابلے کی تیاری کررہے ہیں۔

عمران خان کا کہنا ہے کہ حالات خون خرابے کی طرف جارہے ہیں، چیف جسٹس مداخلت کریں۔

 عمران خان نے خطاب میں کہا ہے کہ انتخابات میں تاریخ کی بد ترین دھاندلی ہوئی، جس کے ثبوت موجود ہیں لیکن ہمیں انصاف نہیں ملا اس لئے سڑکوں پر نکلے ہیں۔

انکا کہنا تھا کہ دھرنا ہمارا جہموری حق ہے، آئین کی خلاف ورزی نہیں کررہے ہیں، انھوں نے سوال کیا کہ کیا آئین یہ نہیں کہتا کہ بنیادی حقوق کا تحفظ کیا جائے۔

چیئرمین تحریکِ انصاف نے مزید کہا ہے کہ حکمرانوں نے ہر قسم کی چوری، منی لانڈرنگ اور ٹیکس چوری کی ہے، دولت بچانے کیلئے جہموریت تباہ کی جارہی ہے، اپنی کرپشن چھپانے کیلئے سب اسمبلی میں اکھٹے ہوجاتے ہیں۔

عمران خان نے کہا کہ یہ قوم جاگ چکی ہے اب کوئی برداشت نہیں کریں گا، حکومت عدالتوں کے احکامات تسلیم نہیں کرتی۔

انھوں نے کہا ہے کہ دولت بچانے کیلئے حکمرانوں کوجہموریت یاد آجاتی ہے۔

عمران خان نے آئی اسلام آباد طاہر عالم کو مخاطب کرتے ہوئے کہا ہے کہ تمہیں چھپنے کی جگہ نہیں ملے گی،انکا کہنا تھا کہ میرے گھر پولیس بھیج کر مجھے ڈرانے کی کوشش کی جارہی ہے۔

عمران خان کا کہنا ہے کہ حکمرانوں کے ہوتے شفاف تحقیقات نہیں ہوسکتی، جمعہ کوعوام کا سمندر ہوگا۔

 

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں