The news is by your side.

Advertisement

ڈرون حملے، سی آئی اے چیف کے خلاف مقدمہ درج ہوتے ہی خارج

اسلام آباد: پاکستان میں ڈرون حملوں پر سی آئی اے کے سابق اسٹیشن چیف کے خلاف مقدمہ درج ہوتے ہی خارج کردیا گیا، اسلام آباد پولیس کا کہنا ہے کہ واقعہ تھانہ سیکریٹریٹ کی حدود کا نہیں ۔

امریکی ڈرون حملے میں میرا خاندان بے قصور مارا گیا، امریکی سی آئی اے کے سابق اسٹیشن چیف کے خلاف مقدمہ درج کیا جائے، قبائلی شہری کریم خان کی درخواست پر بالاآخر شنوائی ہوئی اور مہینوں کی تگ ودو کے بعد اسلام آباد ہائیکورٹ نے تھانہ سیکریٹریٹ کو مقدمہ درج کرنے کا حکم دے دیا۔

اسلام آباد پولیس نے سی آئی اے چیف کے خلاف مقدمہ نمبر اکیانوے درج کرنے کے چند لمحوں بعد ہی خارج کردیا۔

پولیس کا کہنا ہے کہ واقعہ تھانے کی حدود سے باہر ہوا، اس لئے مزید پیشرفت نہیں کرسکتے۔

اکتیس دسمبر دوہزار نو میں شمالی وزیرستان کی تحصیل میرعلی میں ڈرون حملے سے کریم خان کا بیٹا ذہین اللہ اور بھائی آصف اقبال جاں بحق ہوگئےتھے۔

دو ہزار دس میں ڈرون حملوں کے خلاف دائر درخواست میں سی آئی اے اسٹیشن چیف جوناتھن بینکس اور لیگل کونسل کو نامزد کیا گیا تھا۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں