The news is by your side.

Advertisement

کراچی: ذوالفقار مرزا انسدادِ دہشت گردی عدالت میں پیش

کراچی: سابق وزیرِ داخلہ سندھ ذوالفقار مرزا کراچی کی انسدادِ دہشت گردی عدالت میں پیش ہوگئے۔

ڈاکٹر ذوالفقار مرزا کیخلاف مقدمات میں انسداد دہشتگردی ایکٹ کی دفعہ اے ٹی اے سیون بھی شامل ہے، یہ دفعہ دہشت گردی میں ملوث ملزمان پر لگائی جاتی ہیں۔      

بدین کے تھانے پر حملے اور شہر کو زبردستی بند کرانے پر ذوالفقار مرزا کیخلاف مقدمات درج کئے گئے ہیں ۔ دفعات میں تین سو چوبیس، تین سو پچانوے، ایچ چارسو ستائیس، ایک سو انچاس، ایک سو اڑتالیس، ایک سو سینتالیس اور پانچ سو چھ شامل ہیں۔

یہ دفعات دھمکی ،ہنگامہ آرائی، جلاؤ گھیراؤ،بلوہ ، اقدام قتل، نقصان پہنچانا،حملہ کرکے زخمی کرنے کے ملزمان پر لگائی جاتی ہیں ۔ مقدمات ایڈیشنل ایس ایچ او ولی محمد چانڈیو ، حاجی تاج محمد اور امتیاز علی سمیت دیگر نے درج کرائے ہیں۔

واضح رہے کہ باغی رہنما ذوالفقار مرزا نے آج ہر صورت عدالت میں آصف زرداری کے خلاف بیان دینے کا اعلان کر رکھا ہے۔

دوسری جانب پیپلز پارٹی کے اراکین سندھ اسمبلی اور سینٹرز نے ذوالفقار مرزا کے پارٹی قیادت پر الزامات کی شدید مذمت کی ہے۔

گزشتہ روز ذوالفقار مرزا مقدمات کے خلاف سماعت میں پیش ہونے کیلئے فہمیدہ مرزا کے ہمراہ کراچی پہنچے، فہمیدہ مرزا کا کہنا ہے عدالتوں سے انصاف کی امید ہے۔

ذوالفقار مرزا مقدمات کے خلاف سماعت میں پیش ہونے کیلئے مرزا فارم ہاؤس سے کراچی کیلئے نکلے تو ایک لشکر ان کے ہمراہ تھا۔ ذوالفقار مرزا کا انداز پیشی پر جاتے ہوئے بھی وڈیرانہ دکھائی دیا، سیکڑوں حامیوں کا ساتھ اور سو کے لگ بھگ گاڑیوں کا قافلہ تھا،

 ٹھٹہ، گولاچی اور قائدآباد سمیت مختلف مقامات پر ذوالفقار مرزا کے قافلے پر پھول نچھاور کیے گئے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں