site
stats
انفوٹینمنٹ

ہندو انتہا پسند تنظیم کا ویلنٹائن ڈے منانے والوں کیلئے اعلان

بھارت : ہندو انتہا پسند تنظیم نے ویلنٹائن ڈے منانے والوں کیلئے ایک اہم اعلان کردیا ہے کہ  ویلنٹائن ڈے پر گھومنے والے غیر شادی شدہ جوڑوں کی شادی کرادی جائے گی۔

بھارتی میڈیا کے مطابق ہندو انتہا پسند تنظیم ’’ہند مہاسبھا‘‘ کے سربراہ چندر پرکاش کوشک کا کہنا ہے کہ مغربی روایات کے تحت 14 فروری کو ویلنٹائن ڈے منانا کسی طور بھی قابل قبول نہیں، بھارت ایسا ملک ہے جہاں سال کا ہر دن پیار اور محبت کا دن ہوتا ہے، انکا کہنا ہے کہ ہم محبت کے خلاف نہیں لیکن محبت کرنے والے جوڑے کو شادی ضرور کرنی چاہیے۔

چندر پرکاش نے کہا کہ ہمارے رضاکار ویلٹائن ڈے کے موقع پر تفریحی مقامات، شاپنگ مالز اور ہوٹلز میں ایک ساتھ دیکھے جانے والے غیر شادی شدہ جوڑوں کو نشانہ بنائیں گے، اگر وہ ہندو ہوئے تو ان کی شادی کرادی جائے گی اور اگر انہوں نے شادی سے انکار کیا تو ان کی سرگرمیوں کے بارے میں ان کے والدین کو آگاہ کریں گے۔


انہوں نے کہا کہ وہ بھارت میں بسنے والے تمام افراد کو ہندو مانتے ہیں، اس لئے اگر دونوں کا یا کسی ایک کا تعلق دوسرے مذہب سے ہوگا تو ان کی ’’شدھیکرن‘‘ کی جائے گی۔

واضح رہے کہ ہندو مذہب قبول کرنے کی تقریب کو شدھی کرن کہا جاتا ہے جبکہ بھارت میں ایک تحریک چلائی جارہی ہے جس کا نام ’’گھر واپسی ‘‘ ہے،  جس کے مطابق دیگر مذاہب کے ماننے والوں کو ذبردستی ہندو بنایا جاتا ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top