The news is by your side.

Advertisement

کروناوائرس: امریکا کی آدھی آبادی خطرے میں

واشنگٹن: وبائی مرض کرونا نے امریکا میں شہریوں کی نیندیں حرام کردیں، امریکی کانگریس نے خدشہ ظاہر کیا ہے کہ مہلک وائرس سے ملک میں 150 ملین افراد متاثر ہوسکتے ہیں۔

غیرملکی خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق رکن کانگریس ڈاکٹر برین مناہن نے پیش گوئی کی ہے کہ وائرس کی موجودہ صورت حال سے ممکنہ طور پر امریکا میں 70 سے 150 ملین کے قریب افراد متاثر ہوں گے۔

رپورٹ میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ پیش گوئی کے تحت امریکا کی 46 فیصد آبادی کروناوائرس کی پلیٹ میں آسکتی ہے اور لاکھوں اموات کے بھی امکانات ہیں۔ امریکی ادارے برائے طب نے پیش گوئی کو سنجیدگی سے لیتے ہوئے حکومت کو متنبہ کیا ہے کہ معاملے کی حساسیت کو دیکھا جائے۔

ہو سکتا ہے کرونا وائرس چین میں لانیوالی امریکی فوج ہو، چین کا امریکہ کو جواب

امریکا میں کروناوائرس کے 1700 کے قریب کیسزسامنے  آچکے ہیں جبکہ اموات کی تعداد 41 تک پہنچ گئی ہے۔ دوسری جانب ایسے مزید ایک لاکھ افراد موجود ہیں جن کی کروناوائرس کی تشخیص کرنا باقی ہے۔

خیال رہے کہ مہلک مرض کے خوف سے امریکا کی مختلف ریاستیں سنسان ہوچکی ہیں۔ تعلیمی اداروں سمیت کاروباری دفاتر بھی بعض شہروں میں بند ہیں۔ ہوائے اڈوں پر مسافروں کی تعداد حیران کن حد تک کم دیکھی گئی۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں