The news is by your side.

Advertisement

القاعدہ برصغیر کے چار رکن گرفتار، 50 خودکش جیکٹس بنانے والا بھی شامل

کراچی: حساس اداروں نے اورنگی اور کورنگی میں کارروائیاں کرکے القاعدہ برصغیر کے چار دہشت گردوں کو گرفتار کرلیا، ان میں پچاس سے زائد خود کش جیکٹس بنانے والا ملزم بھی شامل ہے۔

تفصیلات کے مطابق کراچی میں وزیرستان سے آئے دہشت گردوں کا بڑا نیٹ ورک قانون کی گرفت میں آ گیا، کائونٹر ٹیرر ازم ڈپارٹمنٹ اور دیگر حساس اداروں نے کراچی کے علاقے اورنگی اور کورنگی میں کارروائیاں کرتے ہوئے چار ملزمان زکریا، نور غوثیہ، عاشق اور معیز کو گرفتار کرلیا، دہشت گردوں کا تعلق القاعدہ برصغیر سے بتایا جاتا ہے۔

سی ٹی ڈی نے بتایا کہ دہشت گردوں نے افغانستان میں تربیت حاصل کی، دہشت گردوں کا تعلق  القاعدہ برصغیر سے ہے،دہشت گرد زکریا نے وزیرستان میں پاک فوج کے خلاف کارروائیاں اور کراچی آ کر چھپ گیا،دہشت گرد زکریا کراچی میں ٹارگٹ کلر کا سہولت کار تھا اور اس نے افغانستان میں تربیت بھی حاصل کی۔

بتایا گیا ہے کہ پکڑے جانے والے دہشت گردوں میں خود کش جیکٹس بنانے کا ماہر دہشت گرد نور غوثیہ بھی شامل ہے جس نے 50 سے زائد خودکش جیکٹس تیار کیں اور وزیرستان میں پاک فوج پر حملے کرکے کراچی میں آکر چھپ گیا تھا۔

 پولیس حکام کے مطابق دہشت گرد عاشق بھتہ خوری اور جبری چندا وصول کرتا تھا اس کے ساتھ پکڑا جانے والا دہشت گرد معیز فرقہ وارنہ ٹارگٹ کلنگ میں مطلوب تھا۔

ملزمان کے قبضے سے خود کش جیکٹس ،چار  ہینڈ گرینڈ،گولیاں، پستول  اور دیگر اسلحہ برآمد ہوا ۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں