The news is by your side.

Advertisement

تھپڑ مارنے پر حارث رؤف سے متعلق فیصلہ ہو گیا

پی سی بی کوڈ آف کنڈکٹ کی خلاف ورزی کے باوجود لاہور قلندرز کےفاسٹ بولر حارث رؤف سزا سے بچ گئے۔

پشاور زلمی کے خلاف میچ کے دوران ساتھی کھلاڑی کو تھپڑ مارنے والے حارث رؤف کو میچ ریفری نے وارننگ دے کر چھوڑ دیا۔

پشاور کے خلاف میچ میں حضرت اللہ ززئی کا کیچ کیوں چھوڑا اور جب وکٹ ملی تو جشن منانے کیلئے قریب آنے پر حارث رؤف نےکامران غلام کو تھپڑدےمارا اور پھر گھورا۔

سب مناظر کیمرے کی آنکھ میں ریکارڈ ہوگئے۔ میچ کے بعد حارث رؤف نے کہا کہ یہ تھپڑ نہیں تھا یہ توصرف مذاق تھا۔

حارث کی منطق کو میچ ریفری نے مان لیا اور آئندہ محتاط رہنےکی ہدایت کر دی۔

پرُجوش نوجوان نے بولر کے اس تھپڑ کو سنجیدہ نہیں لیا اور نہ ہی کوئی برہمی کا اظہار کیا، نوجوان کھلاڑی نے ساتھیوں کے ساتھ مل کر بولر کی خوشی میں اپنا حصہ ملایا۔

فاسٹ بولر کے اس غیرذمہ دارانہ رویے پر کرکٹ ماہرین، مداحوں اور سوشل میڈیا صارفین نے شدید غصے کا اظہار کیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں