میانمار میں مسجد کو شہید کر دیا گیا -
The news is by your side.

Advertisement

میانمار میں مسجد کو شہید کر دیا گیا

ینگون : میانمار میں بدھوں اور مسلمانوں کے درمیان کشیدگی جاری ہے تازہ دم واقعے میں جنونی بدھوں نے چین کے گاؤں ہپانت میں قائم مسجد کو شہید کردیا۔

غیرملکی جریدے ’ڈیلی میل‘ کے مطابق تازہ ترین واقعہ شمالی میانمار میں پیش آیا جہاں بدھوں نے ایک مسجد کو شہید کر دیا ،یہ افسوسناک واقعہ میانمار کی ریاست کاچین کے ایک گاؤں ہپانت میں پیش آیا جہاں شدت پسند بدھوںنے مسجد پر دھاوا بول کرمسجد کو آ گ لگا دی۔

مقامی پولیس نے میڈیا کو تفصیلات بتاتے ہوئے کہا کہ جلائی گئی مسجد بدھوں کی عبادت گاہ (پگوڈا) کے قریب تعمیر کی گئی تھی جس پر بدھوں نے مسلمانوں سے مسجد گرانے کا کہا لیکن مسلمانوں نے یہ مطالبہ ماننے سے انکار کردیا تھا جس کے بعد علاقہ میں کشیدگی پھیل گئی۔

مشتعل بدھوں نے مسلمانوں کے انکار پر مسجد پردھاوا بول دیا اور مسجد کو آگ لگا دی ہے واقعہ اطالع ملتے ہی ملک بھر میں مسلمانوں میں بے چینی کی لہر دوڑ گئی اور انہوں نے احتجاج کرتے ہوئے اپنے غم و غصہ کا اظہار کیا۔

علاقہ میں کشیدگی کے باعث گاؤں میں پولیس کا گشت بڑھاتے ہوئے قانون نافذ کرنے والے اہلکاروں کی اضافی نفری تعینات کر کے علاقہ کے داخلی و خارجی راستوں پر سخت چیکینگ کی جا رہی ہے۔

ذرائع کے مطابق مسجد پر حملہ کرنے والے کسی بدھو کی گرفتاری عمل میں نہیں لائی گئی ہے نہ ہی با ضابطہ طور پر مسجد جلانے کے واقعے کی رپورٹ درج کی گئی ہے،انسانی حقوق کی تنظیموں کی جانب سے میانمار کی متعصب انتظامیہ کے رویے کی سخت مذمت کی گئی ہے۔

دوسری جانب اقوام متحدہ کے انسانی حقوق سے متعلق خصوصی ایلچی نے میانمار حکومت پر زور دیا ہے کہ وہ مسلمانوں کے خلاف ادارہ جاتی امتیازکے خاتمے کو ترجیح بنائے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں