The news is by your side.

Advertisement

سعودی عرب: ویڈیو وائرل ہونے کے بعد خاتون کے خلاف پولیس کی کارروائی

ریاض: سعودی عرب میں انٹرنیٹ پر ایک وائرل ویڈیو میں خاتون نے نازیبا زبان استعمال کی ہے جس پر پولیس نے ان کے خلاف کارروائی شروع کر دی ہے۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق ریاض پولیس نے کہا ہے کہ سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی ایک ویڈیو میں ایک خاتون کی جانب سے نازیبا زبان استعمال کی گئی، جس پر مذکورہ خاتون کے خلاف قانونی چارہ جوئی کا آغاز کیا گیا ہے۔

ریاض پولیس کے معاون ترجمان کا کہنا تھا کہ ویڈیو میں نازیبا زبان استعمال اور دشنام طرازی کرنے والی خاتون کی شناخت بھی ہو گئی ہے۔

سعودی خبر رساں ادارے کے مطابق پولیس ترجمان نے بیان میں کہا کہ سوشل میڈیا پر وائرل ویڈیو پر انفارمیشن کرائمز کے انسداد کا قانون لاگو ہوگا، سیکورٹی فورس کے ماہرین نے یہ بھی معلوم کر لیا ہے کہ ویڈیو کس نے سوشل میڈیا پر شیئر کی۔

سعودی عرب: وائرل ویڈیو کے پیچھے چھپا کردار پکڑا گیا۔۔وجہ کیا بنی

پولیس کے معاون ترجمان خالد الکریدیس نے بتایا کہ ویڈیو شیئر کرنے والی سعودی خاتون کی عمر چالیس کے قریب ہے، خاتون کے خلاف نازیبا زبان کے استعمال پر فوج داری عدالت قانون کے مطابق کارروائی کرے گئی۔

یاد رہے کہ مئی میں بھی سوشل میڈیا پر سیکورٹی فورسز کے خلاف پروپیگنڈا کرنے اور غلط زبان استعمال کرنے پر ایک مقامی شہری کے خلاف پولیس نے ایکشن لیتے ہوئے اسے گرفتار کر لیا تھا، پولیس ترجمان کا کہنا تھا کہ شہری نے سوشل میڈیا پر قانون نافذ کرنے والے ادارے کے اہل کاروں کے لیے غیر مناسب زبان استعمال کی اور ویڈیو بنا کر انٹرنیٹ پر شیئر کی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں