The news is by your side.

Advertisement

ہندی سنیما کے سپراسٹار نے “لگان” کے لیے کیا “قربانی” دی؟

شاید عام لوگ اور سنیما کے شائقین یہ سمجھتے ہیں کہ دنیا بھر کے مشہور اور ان کے پسندیدہ اداکار بہت آسانی سے لاکھوں، کروڑوں‌ روپے کما لیتے ہیں۔ اس کے ساتھ انھیں بہت شہرت اور عزت بھی ملتی ہے۔ لیکن کیا یہ صرف اتنا ہی ہے کہ کوئی شخص کیمرے کے سامنے آئے اور اپنے کردار کے مکالمے نہایت خوبی اور اس مہارت سے ادا کرے کہ اس منظر پر حقیقت کا گمان ہو، اور اسے اس “معمولی مشقت” کا بہت بھاری معاوضہ مل جائے؟

شاید ایسا نہیں‌ ہے۔ اگر ہیرو اور ہیروئن کی بات کی جائے، خاص طور پر ان اداکاروں‌ کی جن کا نام اور انڈسٹری میں‌ خوب چرچا ہو تو یہ اتنا آسان نہیں‌ رہتا۔ وہ اکثر اپنی شہرت اور پرفارمنس کا معیار برقرار رکھنے کے لیے زیادہ محنت اور جتن کرنے پر مجبور ہوتے ہیں۔

آپ نے ہندی فلم لگان تو دیکھی ہو گی۔ کیا آپ جانتے ہیں‌ کہ اپنی فلم لگان کی ریلیز سے قبل ایک تقریب میں‌ بولی وڈ سپر اسٹار عامر خان کو وہاں موجود لوگ دیکھ کر حیران رہ گئے تھے کیوں‌ کہ وہ تیس سے کچھ کم کے دکھائی دے رہے تھے۔

عامر خان سے پوچھا گیا تو معلوم ہوا کہ انھوں‌ نے اس کے لیے کیسی قربانی دی ہے۔

اس فلم میں‌ اپنے کردار سے مطابقت اور حقیقت سے قریب تر لانے کے لیے عامر خان نے گوشت کھانا چھوڑ دیا تھا۔ ناشتہ میں ایک کیلا اور سیب ان کی خوراک بنتے جب کہ دوپہر میں جو اور باجرے کی روٹی کھاتے یا پھر سبزی۔ ان کا تمام کھانا زیتون کے تیل میں پکایا جاتا تھا۔ شام کو نہ ہونے کے برابر کچھ کھایا اور رات ہوئی تو بھوک کیسی ہی لگی ہو عامر خان کو صرف جوس اور سلاد کھانے کو دیا جاتا تھا۔

بات یہیں‌ ختم نہیں‌ ہوتی ہندی سنیما کے اس ستارے نے اپنی بھرپور غذا اور زبان کے چٹخاروں کو چھوڑنے کے ساتھ ساتھ روزانہ چار گھنٹوں تک مختلف قسم کی ورزشیں‌ بھی کیں‌ اور یوں لگان کو کام یاب بنایا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں