The news is by your side.

Advertisement

کسانوں کی حمایت کے لیے بارڈر پر پہنچنے والے عجیب سنگھ کون ہیں؟

نئی دہلی: عجیب سنگھ صرف نام کی ہی منفرد شخصیت نہیں بلکہ وہ ایک ایسے معالج ہیں جو ٹوٹی ہڈیوں کا بغیر آپریشن علاج کر کے لوگوں کو حیران کر دیتے ہیں۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق ہوشیار پور کے یہ بابا اب کسانوں کا مفت علاج کرنے کے لیے غازی پور بارڈر پر پہنچ گئے ہیں، ان کا کہنا ہے کہ وہ ڈسک، سروائیکل یا ٹوٹی ہڈی کا فوری طور پر علاج کر دیتے ہیں، جن مریضوں کو ڈاکٹر آپریشن کے لیے بول دیتے ہیں ان کے علاج سے وہ بغیر آپریشن صحت یاب ہو جاتے ہیں۔

اب پنجاب کے ہوشیار پور سے غازی پور کی سرحد پر پہنچنے والے بابا عجیب سنگھ زرعی قانون کے خلاف احتجاج کرنے والے کسانوں کا مفت علاج کر رہے ہیں، وہ گزشتہ 20 سالوں سے لوگوں کا علاج کر رہے ہیں۔

بابا کا علاج مکمل طور پر دیسی نسخوں پر منحصر ہے، ایکیوپریشر سے بھی لوگوں کا علاج کرتے ہیں، بابا کا کہنا ہے کہ وہ کسانوں کی تحریک کی حمایت کے لیے سرحد پر پہنچے ہیں اور وہ سنگھو بارڈر سے ہو کر آ رہے ہیں۔

گھر کے اخراجات کے سلسلے میں انھوں نے بتایا کہ ان کا ایک کاروبار بھی ہے، کھیتی باڑی اور دیگر وسائل بھی موجود ہیں اس لیے کوئی پریشانی نہیں ہے، اور وہ کسانوں کا مفت علاج کرنے پر خوش ہیں، ان کا کہنا تھا کہ وہ اس طرح احتجاج کرنے والوں کو اپنی حمایت دے رہے ہیں۔

یاد رہے کہ بھارت کی مختلف سرحدوں پر کسان گزشتہ سال 26 نومبر سے نئے نافذ کردہ زرعی قوانین کے خلاف سراپا احتجاج ہیں، اس دوران حکومت اور کسانوں کے مابین 11 ادوار کی بات چیت ہو چکی ہے لیکن کوئی نتیجہ نہیں نکل سکا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں