The news is by your side.

Advertisement

کراچی نہیں چلے گا تو ملک نہیں چلے گا: علی زیدی

کراچی: وفاقی وزیر برائے بحری امور علی زیدی کا کہنا ہے کہ ہم نے صفائی مہم بطور ایک ماڈل شروع کی ہے، روز کی بنیاد پر کچرا اٹھنا چاہیئے۔ کراچی نہیں چلے گا تو ملک نہیں چلے گا۔

تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر برائے بحری امور علی زیدی نے اے آر وائی نیوز کے مارننگ شو باخبر سویرا میں خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ہماری سوچ تھی کہ جو نالے سالوں سے صاف نہیں ہوئے وہ صاف کیے جائیں، صفائی نہ ہونے کے باعث نالوں پر تجاوزات بنا دی گئی ہیں۔

انہوں نے لیٹس کلین کراچی مہم کے حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ نالوں کی صفائی نہ ہونے سے بارشوں میں نکاسی آب کا مسئلہ ہوتا ہے، ہزاروں ٹن کچرا کیماڑی کے پاس جمع ہوگیا ہے، ساحل پر کچرا جمع ہوتا رہا تو ہماری بندر گاہ بند ہوجائے گی۔ مہم سے ایک طرف تو صفائی ہوگی اور دوسری طرف آگاہی ملے گی، تحریک انصاف، ایم کیو ایم اور سندھ حکومت صفائی کے لیے ایک صفحے پر ہیں۔

علی زیدی کا کہنا تھا کہ ناصر حسین شاہ نے وزارت بلدیہ کا قلمدان سنبھالتے ہی فون کیا، ناصر حسین شاہ نے مہم میں بھرپور تعاون کی یقین دہانی کروائی ہے۔ ہمیں مہم کے لیے لاجسٹک مدد مل رہی ہے۔ ہم نے پانچ بڑے اور 6 دیگر نالوں کی صفائی کا منصوبہ بنایا۔ ہم نے مہم بطور ایک ماڈل شروع کی ہے۔

انہوں نے کہا کہ میئر کراچی کو بااختیار بنانے کے لیے ہم کام کر رہے ہیں۔ ہم سندھ حکومت اور دیگر اداروں پر روز صفائی کے لیے دباؤ ڈالیں گے۔ چندے پر مناسب اور غیر مناسب کی بحث سے باہر نکل آئیں۔ حکومت تو ایمبولینس بھی نہیں دیتی پھر بھی اسےٹیکس کیوں دیتے ہیں۔ ہمارے ہاں تو بارش کے بعد بیماریاں پیدا ہوتی ہیں۔ بارش کے بعد کی صورتحال سے بچے بڑے بیمار ہوتے ہیں۔

علی زیدی نے مزید کہا کہ سندھ حکومت کو ہمارے ساتھ مل کر لائحہ عمل بنانا پڑے گا، جو ہم صفائی کر رہے ہیں وہ ماڈل ہے، روز کی بنیاد پر کچرا اٹھنا بھی چاہیئے۔ بہت سارے نالے ڈی ایم سی اور بڑے نالے کے ایم سی کے تحت ہیں، شکر گزار ہوں فوج کا انہوں نے بھی تعاون کی یقین دہانی کروائی۔ کراچی نہیں چلے گا تو ملک نہیں چلے گا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں