تازہ ترین

’پاکستان کیلیے آئی ایم ایف اور ورلڈ بینک سے اچھی خبریں آئیں گی‘

امریکا میں پاکستان کے سفیر مسعود خان نے کہا...

پاکستان کے بیلسٹک میزائل پروگرام کے حوالے سے ترجمان دفتر خارجہ کا اہم بیان

اسلام آباد : پاکستان کے بیلسٹک میزائل پروگرام کے...

ملازمین کے لئے خوشخبری: حکومت نے بڑی مشکل آسان کردی

اسلام آباد: حکومت نے اہم تعیناتیوں کی پالیسی میں...

ضمنی انتخابات میں فوج اور سول آرمڈ فورسز تعینات کرنے کی منظوری

اسلام آباد : ضمنی انتخابات میں فوج اور سول...

طویل مدتی قرض پروگرام : آئی ایم ایف نے پاکستان کی درخواست منظور کرلی

اسلام آباد: عالمی مالیاتی فنڈ (آئی ایم ایف) نے...

پاکستان کیساتھ سیکیورٹی پارٹنرشپ کو بڑھانے کیلئے کام جاری رکھیں گے، امریکا

واشنگٹن: ترجمان امریکی محکمہ خارجہ میتھیوملر نے کہا کہ امریکا اور پاکستان کی سیکیورٹی پارٹنرشپ کو بڑھانے کیلئے کام جاری رکھیں گے۔

امریکی محکمہ خارجہ کے ترجمان میتھیوملر نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے وزیراعظم شہباز شریف کی جانب سے صدر بائیڈن کو لکھے گئے پیغام پر ردعمل دیا ہے۔ انھوں نے کہا کہ پاکستان کے ساتھ سیکیورٹی پارٹنرشپ ترجیح رہی ہے اور ہم اسے جاری رکھیں گے۔

ترجمان میتھیو ملر نے کہا کہ پاکستان میں ہر ایک کے ساتھ قانون کے مطابق سلوک ہوتے دیکھنا چاہتے ہیں۔

امریکا میں سکھ رہنما پر قاتلانہ حملے میں ملوث بھارتی خفیہ اہلکاروں کے حوالے سے سوال پر میتھیو ملر کا کہنا تھا کہ قاتلانہ حملے کی تحقیقات پر میڈیا رپورٹس پر بات نہیں کروں گا۔ بھارتی حکومت پر واضح کیا ہے کہ تحقیقات دیکھنا چاہتے ہیں۔

پریس کانفرنس کے دوران اقوام متحدہ کی جانب سے افغانستان کو 2.9 بلین ڈالر سے زیادہ کی نقد رقم کی فراہمی پر بھی سوال کیا گیا۔

میتھیو ملرسے سوال سے ہوا کہ کیا طالبان کو اربوں ڈالرز کیش مشاورت سے دیا جارہا ہے؟ جس کے جواب میں امریکی محکمہ خارجہ کے ترجمان نے کہا کہ یقینی بنایا جارہا ہے کہ مدد ان افغان باشندوں تک پہنچ جائے جنھیں ضرورت ہے۔

ہمیں شراکت دار تنظیموں سے مضبوط نگرانی اور رپورٹنگ کی بھی ضرورت ہے، ہم تمام امدادی پروگراموں کی نگرانی جاری رکھیں گے۔

ترجمان امریکی محکمہ خارجہ میتھیو ملر نے کہا کہ یقینی بنایا جائے گا کہ امریکی امداد کا طالبان کو فائدہ نہ پہنچے۔

Comments

- Advertisement -