The news is by your side.

Advertisement

القاعدہ کے امریکی رکن برائنٹ نیل وائنس کوسزا مکمل ہونے پررہائی مل گئی

واشنگٹن : القاعدہ کے امریکی رکن برینٹ نیل وائنس کوسزا مکمل ہونے پررہائی مل گئی۔

برینٹ نیل وائنس کو عدالت نے دہشتگردکارروائیوں میں حصہ لینے اورامریکی فوجیوں پر میزائل حملے کے الزام میں آٹھ سال اورتین ماہ کی سزا سنائی گئی تھی، برائنٹ کی سزا مکمل ہونے پراسے جیل سے رہا کیا جارہا ہے۔

پراسیکیوٹرز نے عدالت میں پیش کردہ اپنی رپورٹ میں کہا کہ اس نے حکومت کو اہم معلومات فراہم کی ہیں اور وہ القاعدہ سے منسلک کئی مقدمات میں تعاون کرنے والا واحد اہم گواہ ہے۔برینٹ نے پاکستان اور أفغانستان میں القاعدہ سے متعلق معلومات فراہم کیں اور مشکوک دهشت گردوں کی شناخت، ان کے ٹھکانوں کی نشاندہی اور ان کے منصوبے ناکام بنانے میں مدد دی۔

برینٹ کے وکلا نے عدالت کو بتایا کہ جب اسے مغربی ملکوں میں مسلمانوں پر ظلم و جبر کے بارے میں بتایا گیا تو اسے بہت غصہ آیا، پھر اسے شمالی وزیرستان میں ایک انتہا پسند گروپ نے اسے ایک خودکش بمبار کے طور پر تیار کرنے کا بھی سوچا تھا۔ بعد ازاں وہ القاعدہ میں شامل ہو گیا۔

اسے پاکستانی حکام نے سن 2008 میں گرفتار کرنے کے بعد امریکی حکام کے حوالے کردیا ے تھا، جہاں اس نے جلد ہی حامی بھرلی تھی کہ وہ القاعدہ اور انتہا پسند گروپوں کے متعلق معلومات فراہم کرے گا۔

امریکی فوج کا سابق ملازم برینٹ 2007 میں القاعدہ میں شامل ہوا تھا، برائنٹ کی فراہم کردہ معلومات پرالقاعدہ کے کئی منصوبے ناکام بنانے میں مدد ملی، برائنٹ کو دو ہزار آٹھ میں گرفتار کیا گیا تھا۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں