The news is by your side.

امریکا نے چین کی خود مختاری پر حملہ کیا: روس

ماسکو: روسی صدر پیوٹن کا کہنا ہے کہ امریکا نے چین کی خود مختاری پر حملہ کیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق روسی صدر پیوٹن نے منگل کو بین القوامی عالمی سلامتی سے متعلق کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ امریکا دنیا بھر میں اپنی بالا دستی برقرار رکھنے کی کوشش کر رہا ہے۔

انھوں ںے کہا امریکا نے چین کی خود مختاری پر حملہ کیا، امریکا یوکرین تنازعے کو بھی طول دے رہا ہے، ہمیں اپنے شہریوں کے دفاع کے لیے یوکرین میں آپریشن کرنا پڑا۔

صدر ولادیمیر پیوٹن نے کہا کہ دنیا کو غیر مستحکم اور افراتفرای کا شکار کرنا امریکا کی پالیسی کا حصہ ہے۔

روسی صدر نے خطاب میں امریکا کو ایشیا میں کشیدگی کو ہوا دینے کا ذمہ دار قرار دیا، اور کہا کہ امریکی ایوان نمائندگان کی اسپیکر نینسی پیلوسی کے تائیوان کا دورہ "مکمل طور پر منصوبہ بند اشتعال انگیزی” ہے۔

ماسکو سیکیورٹی کانفرنس سے خطاب میں پیوٹن نے آسٹریلیا، برطانیہ اور ریاستہائے متحدہ کے درمیان AUKUS سیکورٹی معاہدے پر بھی تنقید کی، جو ایشیا پیسیفک خطے میں نیٹو طرز کا بلاک بنانے کی مغربی کوششوں کا ایک واضح ثبوت ہے۔

خبررساں ایجنسی روئٹرز نے پیوٹن کے خطاب پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ ان کا بیان اس بیانیے کا حصہ ہے جسے ماسکو بھرپور طریقے سے آگے بڑھا رہا ہے، ماسکو مغربی تسلط اور نیو نوآبادیاتی نظام کا دعویٰ کر کے مقابلے میں ایک نیا عالمی اتحاد بنانے کی کوشش کر رہا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں