The news is by your side.

ایمسٹرڈیم ایئرپورٹ پر لوگوں‌ نے طیاروں کو اڑان بھرنے سے روک دیا

ایمسٹرڈیم: ماحولیاتی کارکنوں نے ایمسٹرڈیم ایئرپورٹ پر احتجاجاً طیاروں کے آگے دھرنا دے کر انھیں اڑان سے روک دیا۔

تفصیلات کے مطابق ایمسٹرڈیم میں ماحولیاتی آلودگی کے لیے کام کرنے والوں نے انوکھا احتجاج کیا، ماحولیاتی آلودگی کے خلاف ہوائی اڈے کے اندر نجی جیٹ طیاروں کو اڑان بھرنے سے روک دیا گیا۔

ہفتے کے روز سفید اوور پہنے ہوئے سینکڑوں ماحولیاتی کارکنوں نے ایمسٹرڈیم کے شیفول ہوائی اڈے پر نجی جیٹ طیاروں کے حامل علاقے پر دھاوا بول کر دھرنا دیا، مظاہرین نے طیاروں کے پہیوں کے سامنے بیٹھ کر انھیں گھنٹوں تک روانہ ہونے سے روکے رکھا۔

قومی نشریاتی ادارے کے مطابق صورت حال کو قابو کرنے کے لیے ملٹری پولیس حرکت میں آئی تھی، پولیس کو 100 سے زائد مظاہرین کو گرفتار کر کے بسوں میں لے جاتے ہوئے دیکھا گیا۔

روئٹرز کے مطابق یہ احتجاج مصر میں COP27 موسمیاتی مذاکرات کے سلسلے میں کیا گیا تھا، جسے گرین پیس نامی تنظیم نے منظم کیا اور جس کے تحت ایئرپورٹس کے اندر اور باہر مظاہرے کیے گئے۔

گرین پیس نیدرلینڈز مہم کے رہنما ڈیوی زلوچ نے کہا کہ ہم کم پروازیں، زیادہ ٹرینیں اور غیر ضروری مختصر فاصلے کی پروازوں اور نجی جیٹ طیاروں پر پابندی چاہتے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں