The news is by your side.

Advertisement

امریکی صدارتی امیدوار کی بیوی بھی جنسی درندگی کا شکار

واشنگٹن : امریکی صدارتی امیدوار اینڈریو یانگ کی اہلیہ ایولیان لیویانگ نے میل گائناکولوجسٹ کے ہاتھوں جنسی استحصال کا انکشاف کردیا۔

تفصیلات کے مطابق امریکی صدارتی انتخابات کے لیے ڈیموکریٹ کے امیدوار تائیوانی نژاد 45 سالہ اینڈریو یانگ کی اہلیہ بھی کئی ماہ تک جنسی استحصال کا شکار ہوچکی ہیں۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق امریکا میں رواں برس نومبر میں ہونے والے صدارتی انتخابات میں ڈیموکریٹس نے پہلی بار کسی تائیوانی نڑاد امریکی شہری کو بھی ٹکٹ دیا ہے۔

روشن خیال 45 سالہ اینڈریو یانگ اپنے انتخابی جلسوں میں خواتین کی بہبود اور اقلیتوں کے حقوق کی بڑھ چڑھ کر بات کر رہے ہیں جس میں ان کی اہلیہ ایولیان لیو یانگ بھی ان کا بھرپور ساتھ دے رہی ہیں۔

غیر ملکی میڈیا کا کہنا تھا کہ ایولیان لیو یانگ نے کہا کہ می ٹو مہم اور انتخابی مہم کے دوران خواتین کی جانب سے جنسی زیادتی و استحصال کے واقعات سننے کے بعد ان میں بھی آپ بیتی کہنے کی ہمت آگئی ہے۔

صدارتی امیدوار کی اہلیہ نے انٹرویو میں انکشاف کیا کہ حمل کے دوران امریکا کے معروف گائناکولوجسٹ کئی ماہ تک غیر ضروری چیک اپ کے بہانے جنسی استحصال کرتے رہے۔

ایولیان لیو یانگ نے کہا کہ میل ڈاکٹر ان سے خالص نجی اور ذاتی معلومات پوچھتے رہے جسے وہ علاج کو بہتر بنانے کے لیے ضروری سمجھتی رہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ بعد میں مجھے احساس ہوا کہ مذکورہ معاملات کا ان کی صحت اور بچے کی پیدائش سے کوئی تعلق نہیں جب کہ حمل کے ساتویں ماہ میل گائناکولوجسٹ نے ان کا نامناسب طریقے سے چیک اپ کیا اور غیر ضروری طور پر چھوا جس سے وہ کئی ماہ تک ذہنی اذیت میں مبتلا رہیں۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں