The news is by your side.

Advertisement

ایک اور ملک نے اپنی سرحدیں کھول دیں

کرونا وبا نے جہاں پوری دنیا کی معیشت کو متاثر کیا وہیں سیاحت پر منحصر ملک تھائی لینڈ کی سیاحت بھی متاثر بہت زیادہ ہوئی جس کی وجہ سیاحوں کی تعداد میں 80 فیصد کمی کو بتایا گیا ہے۔

وبائی صورتحال کے باعث بیشتر ممالک نے اپنی زمینی، فضائی اور سمندری سرحدیں بند کردی تھیں جس کے باعث سیاحت پر منحصر ممالک کو سب سے زیادہ مشکلات کا سامنا کرنا پڑا، جس میں اٹلی اور تھائی لینڈ سرفہرست ہیں۔

کرونا وائرس کی 18 ماہ تھائی لینڈ میں تباہ کاریاں جاری تھیں تاہم اب تھائی حکومت نے 60 سے زائد ممالک کے لیے اپنی سرحدیں کھول دی ہیں جسکے ایک مرتبہ سیاحت کو بحال کیا جاسکے گا۔

رپورٹ کے مطابق وبائی صورتحال سے قبل تھائی لینڈ سالانہ 40 لاکھ سیاح جاتے تھے جن کی تعداد میں وبا کے بعد 80 فیصد تک کمی آئی ہے۔

تھائی حکام کا کہنا ہے کہ سیاحوں کی تعداد اگلے سال 1.5 کروڑ تک بڑھنے کی توقع ہے، جس سے ملک کی آمدنی میں 30 ارب ڈالر سے زیادہ کا اضافہ ہو گا۔

میڈیا رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ برطانیہ، چین، جاپان، امریکا اور یورپ کے کئی حصوں سمیت ایسے 60 سے زائد ممالک کو شامل کیا گیا ہے جہاں وبا کا خطرہ کم ہوگیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں